DONATE NOW donation

Home Al-Quran Surah As Saffat Ayat 14 Translation Tafseer

رکوعاتہا 5
سورۃ ﳦ
اٰیاتہا 182

Tarteeb e Nuzool:(56) Tarteeb e Tilawat:(37) Mushtamil e Para:(23) Total Aayaat:(182)
Total Ruku:(5) Total Words:(957) Total Letters:(3825)
12-15

بَلْ عَجِبْتَ وَ یَسْخَرُوْنَ۪(۱۲)وَ اِذَا ذُكِّرُوْا لَا یَذْكُرُوْنَ۪(۱۳)وَ اِذَا رَاَوْا اٰیَةً یَّسْتَسْخِرُوْنَ۪(۱۴)وَ قَالُوْۤا اِنْ هٰذَاۤ اِلَّا سِحْرٌ مُّبِیْنٌۚۖ(۱۵)
ترجمہ: کنزالعرفان
بلکہ تم نے تعجب کیااور وہ مذاق اڑاتے ہیں ۔اورجب انہیں سمجھایا جائے تو سمجھتے نہیں ۔ اور جب کوئی نشانی دیکھتے ہیں توٹھٹھا کرتے ہیں ۔ اور کہتے ہیں یہ تو کھلا جادوہی ہے۔


تفسیر: ‎صراط الجنان

{بَلْ عَجِبْتَ: بلکہ تم نے تعجب کیا۔} اس آیت اور اس کے بعد والی تین آیات کا خلاصہ یہ ہے کہ اے حبیب ! صَلَّی اللہ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ، آپ نے کفار ِمکہ کے انکار پر تعجب کیا کہ آپ کی رسالت اور مرنے کے بعد اٹھنے پر دلالت کرنے والی واضح نشانیاں  اور دلائل ہونے کے باوجود وہ کس طرح انکار کرتے ہیں  اور وہ کفار آپ کا اور آپ کے تعجب کرنے کا یا مرنے کے بعد اٹھنے کامذاق اڑاتے ہیں ، اور جب انہیں  کسی چیز کے ذریعے سمجھایا جائے تو سمجھتے نہیں  ،اور جب چاند کے ٹکڑے ہونا وغیرہ کوئی نشانی دیکھتے ہیں  تو مذاق کرتے ہیں  اور کہتے ہیں  یہ تو کھلا جادوہی ہے۔(مدارک، الصافات، تحت الآیۃ: ۱۲-۱۵، ص۹۹۹)

Reading Option

Ayat

Translation

Tafseer

Fonts Setting

Download Surah

Related Links