DONATE NOW donation

Home Al-Quran Surah Sad Ayat 4 Translation Tafseer

رکوعاتہا 5
سورۃ ﳧ
اٰیاتہا 88

Tarteeb e Nuzool:(38) Tarteeb e Tilawat:(38) Mushtamil e Para:(23) Total Aayaat:(88)
Total Ruku:(5) Total Words:(818) Total Letters:(3020)
4

وَ عَجِبُوْۤا اَنْ جَآءَهُمْ مُّنْذِرٌ مِّنْهُمْ٘-وَ قَالَ الْكٰفِرُوْنَ هٰذَا سٰحِرٌ كَذَّابٌۖۚ(۴)
ترجمہ: کنزالعرفان
اور انہیں اس بات پر تعجب ہوا کہ ان کے پاس انہیں میں سے ایک ڈر سنانے والا (رسول) تشریف لایااور کافروں نے کہا: یہ جادوگرہے، بڑا جھوٹا ہے۔


تفسیر: ‎صراط الجنان

{وَ عَجِبُوْا: اور انہیں  تعجب ہوا۔} یعنی کفارِ مکہ کو اس بات پر تعجب ہوا کہ محمد مصطفی صَلَّی اللہ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ ظاہری خِلقَت، باطنی اَخلاق،نسب اور شکل و صورت میں  تو ہم جیسے انسان ہیں  ،پھر یہ کیسے ہو سکتا ہے کہ ہم میں  سے صرف وہ رسالت جیسے بلند منصب کے حق دار ٹھہریں  اور جب کفارتاجدارِ رسالت صَلَّی اللہ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ کی عظمت و شان دیکھ کر حیران رہ گئے تو آپ صَلَّی اللہ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ کو (مَعَاذَ اللہ) جادوگر اور جھوٹا کہنے لگے ۔( روح البیان، ص، تحت الآیۃ: ۴، ۸ / ۴)

Reading Option

Ayat

Translation

Tafseer

Fonts Setting

Download Surah

Related Links