DONATE NOW donation

Home Al-Quran Surah An Nahl Ayat 47 Translation Tafseer

رکوعاتہا 16
سورۃ ﰇ
اٰیاتہا 128

Tarteeb e Nuzool:(70) Tarteeb e Tilawat:(16) Mushtamil e Para:(14) Total Aayaat:(128)
Total Ruku:(16) Total Words:(2082) Total Letters:(7745)
47

اَوْ یَاْخُذَهُمْ عَلٰى تَخَوُّفٍؕ-فَاِنَّ رَبَّكُمْ لَرَءُوْفٌ رَّحِیْمٌ(۴۷)
ترجمہ: کنزالعرفان
یا انہیں آہستہ آہستہ نقصان پہنچاتے ہوئے پکڑلے تو بیشک تمہارا رب نہایت مہربان رحمت والا ہے۔


تفسیر: ‎صراط الجنان

{اَوْ یَاْخُذَهُمْ:یا انہیں  پکڑلے ۔} اس آیت کا ایک معنی یہ ہے کہ اللّٰہ تعالیٰ شروع سے ہی انہیں  عذاب میں  گرفتار نہیں  کرے گا بلکہ پہلے انہیں  خوف میں  مبتلا کرے گا پھر اس کے بعدانہیں  عذاب میں  گرفتار کر دے گا۔ خوف میں  مبتلا کرنے کی صورت یہ ہو گی کہ اللّٰہ تعالیٰ ایک گروہ کو ہلاک کر دے گا تو اس کے قریب والے ا س خوف میں  مبتلا ہو جائیں  گے کہ کہیں  ان پر بھی ویساہی عذاب نازل نہ ہو جائے۔ ایک طویل عرصہ تک وہ اس خوف اور وحشت میں  مبتلا رہیں  گے ، اس کے بعد ان پر عذاب نازل ہو گا۔دوسرا معنی یہ ہے کہ اللّٰہ تعالیٰ ان پر فوراًعذاب نازل نہیں  کرے گا بلکہ ان کی جانوں  اور مالوں  کو تھوڑا تھوڑا کم کرتا رہے گا یہاں  تک کہ سب ہلاک ہو جائیں  گے ۔ (تفسیرکبیر، النحل، تحت الآیۃ: ۴۷،۷ / ۲۱۲-۲۱۳)

{فَاِنَّ رَبَّكُمْ لَرَءُوْفٌ رَّحِیْمٌ:تو بیشک تمہارا رب نہایت مہربان رحمت والا ہے۔} یعنی اللّٰہ تعالیٰ چونکہ بہت مہربان اور رحمت والا ہے اس لئے وہ اکثر اُمور میں  مہلت دے دیتا ہے ا ور عذاب نازل کرنے میں  جلدی نہیں  فرماتا۔(تفسیرکبیر، النحل، تحت الآیۃ: ۴۷، ۷ / ۲۱۳)

Reading Option

Ayat

Translation

Tafseer

Fonts Setting

Download Surah

Related Links