Home Al-Quran Surah Al Kahf Ayat 17 Urdu Translation Tafseer

رکوعاتہا 12
سورۃ ﰌ
اٰیاتہا 110

Tarteeb e Nuzool:(69) Tarteeb e Tilawat:(18) Mushtamil e Para:(15-16) Total Aayaat:(110)
Total Ruku:(12) Total Words:(1742) Total Letters:(6482)
17

وَ تَرَى الشَّمْسَ اِذَا طَلَعَتْ تَّزٰوَرُ عَنْ كَهْفِهِمْ ذَاتَ الْیَمِیْنِ وَ اِذَا غَرَبَتْ تَّقْرِضُهُمْ ذَاتَ الشِّمَالِ وَ هُمْ فِیْ فَجْوَةٍ مِّنْهُؕ-ذٰلِكَ مِنْ اٰیٰتِ اللّٰهِؕ-مَنْ یَّهْدِ اللّٰهُ فَهُوَ الْمُهْتَدِۚ-وَ مَنْ یُّضْلِلْ فَلَنْ تَجِدَ لَهٗ وَلِیًّا مُّرْشِدًا۠(۱۷)
ترجمہ: کنزالایمان
اور اے محبوب تم سورج کو دیکھو گے کہ جب نکلتا ہے تو ان کے غارسے دہنی طرف بچ جاتا ہے اور جب ڈوبتا ہے تو انہیں بائیں طرف کترا جاتا ہے حالانکہ وہ اس غار کے کھلے میدان میں ہیں یہ اللہ کی نشانیوں سے ہے جسے اللہ راہ دے تو وہی راہ پر اور جسے گمراہ کرے تو ہرگز اس کا کوئی حمایتی راہ دکھانے والا نہ پاؤ گے


تفسیر: ‎صراط الجنان

{وَ تَرَى الشَّمْسَ: اور تم سورج کو دیکھو گے۔} آیت میں  فرمایا گیا کہ سورج اصحاب ِ کہف کے دائیں  اور بائیں  ہوکر گزرتا ہے یعنی ان پر تمام دن سایہ رہتا ہے اور طلوع سے غروب تک کسی وقت بھی دھوپ کی گرمی انہیں  نہیں  پہنچتی۔( مدارک، الکھف، تحت الآیۃ: ۱۷، ص۶۴۴)

            مفتی احمد یار خان نعیمی رَحْمَۃُاللّٰہِ تَعَالٰی عَلَیْہِ فرماتے ہیں  کہ  ان کا غار جنوب رخ (میں ) واقع ہوا ہے کہ سورج نکلتے وقت بائیں  اور غروب کے وقت داہنے ہو جاتا ہے اور ان پر کسی وقت دھوپ نہیں  پہنچتی، یہ ہی تفسیر زیادہ قوی ہے۔( نور العرفان، الکہف، تحت الآیۃ: ۱۷، ص۴۷۰)آیت میں  مزید فرمایا کہ حالانکہ وہ اس غار کے کھلے حصے میں  ہیں  گویا  ہر وقت انہیں  تازہ ہوائیں  پہنچتی رہتی ہیں  یعنی وہ کھلے میدان میں  ہونے کے باوجود دھوپ سے محفوظ ہیں ، یا تو ان کی یہ کرامت ہے یا کچھ رخ ہی ایسا ہے ۔

Reading Option

Ayat

Translation

Tafseer

Fonts Setting

Download Surah

Related Links