سب سے اچھی کتاب / میں بڑا ہو کر کیا بنوں گا؟ / کیا آپ جانتے ہیں؟

ہمارے پیارے نبی حضرت محمد مصطفےٰ صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم کا خوبصورت ارشاد ہے : “ فَإِنَّ خَيْرَ الْحَدِيثِ كِتَابُ اللهِ  یعنیبہترین بات اللہ کی کتاب (قراٰنِ مجید) ہے۔ ( مسلم ، ص 335 ، حدیث : 2005)

اچھے بچّو! قراٰنِ کریم اللہ پاک کی آخری کتاب ہے جو اس نے اپنے آخری نبی حضرت محمد صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم پر اپنے بندوں کی راہنمائی (Guidance)کیلئے اُتاری ہے۔ جیسےاللہ پاک اپنی تمام مخلوقات سے اعلیٰ اور بَرتر (Superior) ہے یونہی اس کی کتاب یعنی قراٰنِ مجید بھی تمام کتابوں سے افضل اور بہترین ہے۔

پیارے بچّو! قراٰنِ مجید دنیا کی واحد بے مثال (Matchless) کتاب ہے کہ اس جیسی کتاب ساری دنیا کے عُلَما (Scholars) بھی مِل کر نہیں لکھ سکتے۔ دوسری کتابوں میں تبدیلی ہوسکتی ہے بلکہ پہلے کی آسمانی کتابوں زبور ، توریت ، انجیل میں تبدیلی کی بھی گئی لیکن قراٰنِ مجید کی حفاظت کا ذِمّہ خود اللہ پاک نے لیا ہے یہی وجہ ہے کہ جب سے قراٰن مجید نازل ہوا ہے اس میں  ایک حرف  کی بھی  کمی بیشی یا تبدیلی نہیں ہوئی ۔

اس کے پڑھنے والے کو ہر ہر حرف کے بدلے دس دس نیکیاں ملتی ہیں۔ اس میں لکھے گئے سبق آموز (Moralizer) تاریخی واقعات ، اچّھی اور کامیاب زندگی گزارنے کے راہنما اصول ، ہر ایک بات ہی انسان کے لئے مُفید ہے جن سے نصیحت حاصل کرنے والا دنیا و آخرت میں کامیاب (Successful) ہوگا۔ اللہ پاک ہمیں قراٰنِ مجید پڑھنے ، سمجھنے اور اس پر عمل کرنے کی توفیق عطا فرمائے۔ اٰمِیْن بِجَاہِ النَّبِیِّ الْاَمِیْن صلَّی اللہ تعالٰی علیہ واٰلہٖ وسلَّم

ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ

ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ ـــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ*ماہنامہ  فیضانِ مدینہ ، کراچی

 

Share

سب سے اچھی کتاب / میں بڑا ہو کر کیا بنوں گا؟ / کیا آپ جانتے ہیں؟

(1)اَلسَّلَامُ عَلَیْکُمْ وَرَحْمَۃُ اللّٰہِ وَبَرَکَاتُہ!میرا نام میمونہ عطّاریہ بنتِ مفتی شفیق عطّاری ہے۔ میں دارُالمدینہ اِسلامک اسکول سسٹم میں پڑھتی ہوں۔ میں کلاس 10تک پڑھوں گی۔ پھر مجھے میرے والدِگرامی عالِمہ کورس میں داخل کروائیں گے ، میں دینی و دنیاوی  دونوں طرح کی تعلیم(شریعت کے دائرے میں رہ کر) حاصل کروں گی ، ماں باپ کی فرمانبردار بنوں گی ، ان کا نام روشن کروں گی اور اگر اللہ  نے  چاہا تو قراٰن بھی حفظ کروں گی۔ (ریگل چوک ، کراچی)

 (2)میں بڑی ہوکر مُعَلِّمَہ اور نعت خواں بنوں گی۔ (نور فاطمہ ، عمر8سال ، جدہ شریف) (3)میں بڑی ہوکر عالِمہ اور حافظہ بننا چاہتی ہوں۔ (علیزہ صغیر ، عمر9سال ، لندنUK) (4)میں بڑا ہوکر عالمِ دین بنوں گا۔ (رافع ، لاڑکانہ) (5)میں بڑا ہوکر قاریِ قراٰن بنوں گا۔ (منیب احمد ، عمر10سال ، گوجر خان) (6)میں بڑا ہو کر حافظ ، نعت خواں اور مفتی بنوں گا۔ (سیّد ہلال رضا بن سیّد محمد سلیم ، عمر 7سال ، کراچی) (7)میں بڑا  ہو کر نعت خواں اور عالِم بنوں گا۔ (سیّد شایان رضا بن سیّد اسلم عطّاری ، کراچی) (8)میں بڑاہوکر مفتی بننا چاہتاہوں ، میں اِنْ شَآءَ اللہ مفتی قاسم صاحب جیسا مفتی بنوں گا۔ (اُسید رضا بن عبدالحفیظ ، عمر9سال ، سکھر)

Share

سب سے اچھی کتاب / میں بڑا ہو کر کیا بنوں گا؟ / کیا آپ جانتے ہیں؟

سوال : مقامِ ابراہیم کسے کہتے ہیں؟

جواب : وہ پتھر جس پر کھڑے ہو کر حضرت ابراہیم علیہ الصّلٰوۃ والسَّلامنے کعبہ معظمہ کی تعمیر فرمائی۔  

(صراط الجنان ، 1 / 205)

سوال : وہ کون سا کھانا ہے جس میں100سال گزرنے کے بعد بھی بُو پیدا نہیں ہوئی تھی؟

جواب : اللہ کریم کے نبی حضرت سیّدُنا عُزَیر علیہ السَّلام کا کھانا۔ (پ3 ، البقرۃ : 259)

سوال : قراٰنِ مجید میں           کتنی آیاتِ سجدہ ہیں؟

جواب : 14۔ ([1])

سوال : حضرت سیّدُنا عیسیٰ علیہ السَّلام کس قوم کی طرف نبی بنا کر بھیجے گئے تھے؟

جواب : بَنِی اِسرائیل کی طرف۔  (پ3 ، اٰلِ عمرٰن : 49)

سوال : سُورۂ یوسف میں حضرت سیّدُنا یوسف علیہ السَّلام کا مبارَک نام کتنی بار آیا ہے؟

جواب : 25بار۔  (بصائر ذوی  التمییز ، 6 / 48)

سوال : اُمَّھاتُ المؤمنین میں سے کن کا انتقال پیارے آقا محمدِ مصطَفےٰ صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم کی ظاہری حیات میں ہوا تھا؟

جواب : اُمُّ المؤمنین حضرت سیّدَتُنا خَدِیجۃُ الکُبریٰ اور  اُمُّ المؤمنین حضرت سیّدَتُنا زینب بنتِ خُزَیمَہرضی اللہ عنہما کا۔   (مواھب لدنیہ ، 1 / 402)

سوال : وہ کون سا کیڑا ہے جو آگ میں پیدا ہوتا اور اسی میں رہتا ہے؟

جواب : ’’سَمَنْدَل ‘‘نام کا ایک کیڑاہے۔    (خزائن العرفان ، ص537)

ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ

ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ ـــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ*ماہنامہ  فیضانِ مدینہ ، کراچی



(1)   قرآنِ مجید میں چودہ(14)آیتیں ایسی ہیں کہ جن کے پڑھنے یا سننے سے پڑھنے والے اور سننے والے دونوں پر سجدہ کرنا واجب ہوجاتا ہے اس کو سجدۂ تِلاوت کہتے ہیں۔  (جتنی زیور ، ص297)

Share

Articles

Comments


Security Code