DONATE NOW donation

Home Al-Quran Surah Al Ghashiyah Ayat 14 Translation Tafseer

رکوعاتہا 1
سورۃ ﴜ
اٰیاتہا 26

Tarteeb e Nuzool:(68) Tarteeb e Tilawat:(88) Mushtamil e Para:(30) Total Aayaat:(26)
Total Ruku:(1) Total Words:(100) Total Letters:(382)
14-16

وَّ اَكْوَابٌ مَّوْضُوْعَةٌۙ(۱۴)وَّ نَمَارِقُ مَصْفُوْفَةٌۙ(۱۵)وَّ زَرَابِیُّ مَبْثُوْثَةٌؕ(۱۶)
ترجمہ: کنزالعرفان
اور رکھے ہوئے گلاس ہوں گے۔اور صف در صف گاؤ تکیے لگے ہوئے ہوں گے۔اور عمدہ قالین بچھے ہوئے ہوں گے۔


تفسیر: ‎صراط الجنان

{وَ اَكْوَابٌ مَّوْضُوْعَةٌ: اور رکھے ہوئے گلاس ہوں  گے۔} اس آیت اور ا س کے بعد والی دو آیات کا خلاصہ یہ ہے کہ چشموں  کے کناروں  پر ترتیب سے گلاس رکھے ہوئے ہوں  گے جن کی ترتیب کا حسن اور صفائی دیکھنے سے بھی لذت حاصل ہوگی جیسے اگر کسی کے خوبصورت کچن میں  جائیں  جہاں  ہرچیز نہایت ترتیب اور نفاست سے رکھی ہو تو اس منظر سے ہی خوشی حاصل ہوتی ہے۔ جنتی جب اُن گلاسوں  سے دودھ، شہد، شراب وغیرہا پینا چاہیں  گے تو وہ انہیں  خود ہی بھرے ہوئے ملیں  گے۔ کوزے تو چشموں  کے کنارے چنے ہوئے ہوں  گے جبکہ ان کے گھروں  کا منظر بھی قابل ِدید ہوگا کہ وہاں  قالین بچھے ہوں  گے جو بہت آرام دہ اور نہایت ہی خوشنماہوں  گے اور صف در صف گاؤ تکیے لگے ہوئے ہوں  گے۔

            یہاں  جداگانہ عرض ہے کہ گھر کی اَشیاء کا نفاست و صفائی اور ترتیب سے ہونا ایک عمدہ خوبی ہے لہٰذا گھروں  میں  جو اشیاء موجود ہوں  انہیں  ترتیب اور ڈھنگ سے رکھنا چاہیے۔

Reading Option

Ayat

Translation

Tafseer

Fonts Setting

Download Surah

Related Links