ٹھہرئیے! پہلے اجازت لیجئے

آؤ بچو! حدیثِ رسول سنتے ہیں

ٹھہریئے!پہلےاجازت لیجئے

*   اویس یامین عطاری

ماہنامہ ربیع الآخر 1442ھ

پیارے نبی حضرت محمد  صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم  نے اِرشاد فرمایا :

اِذَا اسْتَاْذَنَ اَحَدُكُمْ ثَلَاثاً فَلَمْ يُؤْذَنْ لَهُ فَلْيَرْجِعْ

 ترجمہ : جب کوئی تین بار اجازت مانگ لے اور  اسے اجازت نہ ملے تو وہ واپس چلا جائے۔

(بخاری ، 4 / 170 ، حدیث : 6245)

پیارے بچّو!پتا چلا کہ کسی کے گھر میں بغیر اجازت داخل نہیں ہونا چاہئے ، بعض سمجھ دار بچّے اپنے دوست یا کسی رشتے دار کے گھر جاتے ہیں تو بغیر اجازت گھر میں داخل ہوجاتے ہیں ، اگر دروازہ اندر سے Lock ہوتا ہے تو زور زور سے دروازہ بجاتے ہیں ، بار بار Door Bell بجاتے ہیں ، گھر کے اندر جھانکتے ہیں ، آوازیں لگاتے ہیں جو کہ اچھی بات نہیں ہے۔

اچھے بچّو! جب بھی کسی کے گھر جائیں تو گھر میں داخل ہونے سے پہلے اجازت لینے کے لئے مناسب انداز سے Door Bell بجائیں یا دروازہ کھٹکھٹائیں ، اگر گھر کے اندر سے کوئی پوچھے : کون ہے؟ تو “ میں ہوں “ یا “ دروازہ کھولو “ کہنے کے بجائے اپنا نام بتائیے ، گھر میں داخل ہونے کی اجازت مل جائے تو سَلام کرتے ہوئے داخل ہوں۔ اسی طرح جب کوئی ہمارے گھر پر آئے اور دروازہ یا بیل بجائے تو ہمیں بھاگ کر فوراً دروازہ نہیں کھولنا چاہئے بلکہ پہلے اندر سے ہی پوچھنا چاہئے : کون ہے؟ جب آنے والا اپنا نام بتا دے اور آپ ان کو اچھی طرح جانتے ہوں تو دروازہ کھول دیجئے ورنہ دروازہ کھولنے سے پہلے اپنے امّی ابّو کو آکر نام بتائیے ، اگر آپ کے امّی ابّو اجازت دیں تو دروازہ کھولئے۔

اللہ پاک ہمیں ان باتوں پر عمل کرنے کی توفیق عطا فرمائے۔                         اٰمِیْن بِجَاہِ النَّبِیِّ الْاَمِیْن  صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم  

ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ

ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ ـــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ*   ماہنامہ  فیضانِ مدینہ ، کراچی

 

Share

Articles

Comments


Security Code