تُونےمجھ کوحج پہ بلایا،یا اللہ مِری جھولی بھردے

یا اللہ   مِری جھولی بھردے

تُونے مجھ کو  حج پہ بلایا ، یااللہ مِری جھولی بھردے

گردِ کعبہ خوب پِھرایا ، یااللہ مِری جھولی بھردے

مولیٰ مجھ کو نیک بنادے ، اپنی اُلفت دل میں بسادے

بَہرِ صَفا اور بَہرِ مَروہ ، یااللہ مِری جھولی بھردے

واسِطہ نبیوں کے سرور کا ، واسِطہ صِدّیق اور عُمَر کا

واسِطہ عثمان و حیدر کا ، یااللہ مِری جھولی بھردے

میں ہوں بندہ تُو ہے مولیٰ ، تُو ہے قادِر میں ناکارہ

میں منگتا تُو دینے والا ، یااللہ مِری جھولی بھردے

دے حُسنِ اَخلاق کی دولت ، کردے عطا اِخلاص کی نعمت

مجھ کو خزانہ دے تَقویٰ کا ، یااللہ مِری جھولی بھردے

بخش دے میری ساری خطائیں ، کھول دے مجھ پر اپنی عطائیں

برسادے رَحْمت کی برکھا ، یااللہ مِری جھولی بھردے

جنّت میں آقا کا پڑوسی ، بن جائے عطّاؔر الٰہی

مولیٰ از پئے قُطبِ مدینہ ، یااللہ مِری جھولی بھردے

وسائلِ بخشش( مُرَمَّم) ، ص 121

از شیخِ طریقت امیرِ اہلِ سنّت دَامَتْ بَرَکاتُہُمُ الْعَالِیَہ

Share

تُونےمجھ کوحج پہ بلایا،یا اللہ مِری جھولی بھردے

اَفلاک سے اونچا ہے ایوان محمد کا

اَفلاک سے اونچا ہے اَیوان محمد کا

مَخلوقِ الٰہی ہے سامان محمد کا

پاتے ہیں سبھی صدقہ  اُن کے درِ اَقدس سے

ہر ذَرَّۂ عالَم ہے مہمان محمد کا

ہوتی ہے ہر اک نعمت  تقسیم مدینے سے

کونین میں جاری ہے  فیضان محمد کا

دیتے ہیں مَلَک  پہرہ سرکار کے روضے پر

جبریلِ مُعَظَّم ہے دَربان محمد کا

دنیا کی سبھی باتیں مٹ جائیں مرے دل سے

ہو وِردِ زباں کلمہ ہر آن محمد کا

جب مَدْح و ثنا حق نے  قرآن میں فرمائی

کیا مُنہ ہے جو واصِف ہو انسان محمد کا

تقدیر جمیؔل اپنی شاہوں سے رہے بڑھ کر

سگ اپنا بنائے گر دربان محمد کا

قبالۂ بخشش ، ص74

                                                                                                                                                                                                                                                                                                                                                                   از مَدَّاحُ الحبیب مولانا جمیل الرحمٰن قادری رضوی رحمۃ اللہ علیہ

برکھا : بارش۔ افلاک : آسمانوں۔ اَیوان : محل ، مکان۔ مَلَک : فرشتے۔ دَربان : پہرے دار۔ واصِف : تعریف کرنے والا۔

Share

Articles

Comments


Security Code