مدنی مذاکرے کے سوال جواب

Image
جواب:علمائے کرام نے اپنے نام کے ساتھ محمد کی جگہ ”M“ لکھنے سے منع فرمایا ہے، اسی طرح بہارِ شریعت میں نبیِّ كريم صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم کا نامِ نامی اسمِ گرامی کے ساتھ دُرودِ پاک کے بدلے ” ؐ “یا ”صَلْعَم“ لکھنےکو ناجائز و حرام فرمایا گیا ہے۔(بہارِ شریعت،ج 1،ص534)
Image
جواب:جی ہاں! اللہ پاک نے حضرت مریم رضی اللہ عنہا کو بہت عظمت عطا فرمائی، آپ رضی اللہ عنہا کے پاس جنّت سے بے موسم کے پھل آتے تھے۔ حضرت سیّدُنا زکریا علٰی نَبِیِّنَا وعلیہ الصَّلٰوۃ وَالسَّلام حضرت مریم رضی اللہ عنہا کے پاس جاتے تو وہاں بے موسم کے پھل پاتے۔
Image
روزہ رکھنے کے بعد منجن یا برش پیسٹ کے ذریعے دانت صاف کرنے سے بچنا چاہئے، اگر ان کا ایک ذرّہ بھی حلق میں اُترتا ہوا محسوس ہوا تو روزہ ٹوٹ جائے گا، کیونکہ پیسٹ بہت تیز ہوتا ہے اور منجن بھی کافی نمکین و باریک ہوتا ہے ان
Image
سوال:چادر اوڑھ کر نماز پڑھتے ہوئے داڑھی چھپ جائے تو کیا نماز ہوجائے گی؟
جواب:ہوجائے گی، البتہ نماز میں چادر اس طرح اوڑھنا کہ منہ اورناک چھپ جائے مکروہِ تحریمی ہے۔
(ردالمحتار،ج 2،ص511مدنی مذاکرہ،2ربیع الآخر1439ھ)                                                                                   

Image
نابالغ بچّوں پرسجدۂ تلاوت واجب نہیں ہوتا، البتہ انہیں سجدۂ تلاوتکرنے کا ذہن دیا جائے تاکہ یہ بڑے ہوکر سجدۂ تلاوت کریں۔ اگر نابالغ نے آیتِ سجدہ پڑھی اور بالغ نے سُن لی تو اب بالغ پر سجدۂ تلاوت کرنا واجب ہے۔
Image
تحِ خیبر کے بعد سرکارِ مدینہ صلَّی اللہ تعالٰی علیہ واٰلہٖ وسلَّم کو بُغض و دشمنی کی وجہ سے ایک یہودیہ عورت زینب بنتِ حارث نے بکری کے گوشت میں زہر دیا تھا اور اللہ پاک نے حضورِ اکرم صلَّی اللہ تعالٰی علیہ واٰلہٖ وسلَّم کو یہ معجزہ عطا فرمایا کہ گوشت
Image
میّت کے پیٹ پر کوئی بھاری چیز مثلاً گیلی مٹی وغیرہ رکھنے کا حکم ہے کہ پیٹ پُھول نہ جائے۔(بہارِ شریعت،ج 1،ص809 ملخصاً) شیشہ رکھنا ضَروری نہیں ہے، اگر کسی نے شیشہ رکھ بھی دیا تو حرج بھی نہیں۔ میّت کی چارپائی کے نیچے پلیٹ میں آٹا رکھتے ہیں ،یہ میں
Image
ہارِ شریعت میں ہے: ریشم کے کپڑے مَرد کے لئے حرام ہیں، بدن اور کپڑوں کے درمیان کوئی دوسرا کپڑا حائل ہو یا نہ ہو، دونوں صورتوں میں حرام ہیں اور جنگ کے موقع پر بھی نِرے (یعنی صرف) ریشم کے کپڑے حرام ہیں، ہاں اگر تانا سوت ہو
Image
اشارے کے ذریعے ہوگا جبکہ ان کے اشارے سمجھ میں آتے ہوں۔ فتاویٰ عالمگیری میں ہے:نِکاح جس طرح بول کر ہوتا ہے اسی طرح گونگے کے اِشارے سے بھی ہوجائے گا جبکہ اس کے اِشارے سمجھ میں آتے ہوں۔