Book Name:Muaf Karny K Fazail

سےمالامال قیمتی مَدَنی پھول اُمّتِ مُسْلِمَہ تک پہنچائے جاتے ہیں۔٭ہفتہ واراِجتماع بےنمازیوں کونمازیبنانےمیں بہت مددگار ہے۔٭ہفتہ وار اِجتماع کی بَرَکت سے دعوتِ اسلامی کے مَدَنی ماحول کیتشہیر و نیک نامی ہوتی ہے۔٭ہفتہ وار اِجتماع میں مانگی جانے والی دُعائیں قَبول ہوتی ہیں٭ہفتہ وار اِجتماع میں انبیائے کِرام عَلَیْہِمُ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلام،صحابَۂ کِرام عَلَیْہِمُ الرِّضْوَان  اور اَولِیائے کِرام رَحْمَۃُ اللّٰہ ِتَعَالٰی عَلَیْہِمْ اَجْمَعِیْن کی سِیرتِ مُبارَکہ پرسُنّتوں بھرے بیانات ہوتےہیں۔جو خوش نصیب عاشقانِ رسول ہفتہ وار اِجتماع میں شرکت کرتےہیں،اَمیر ِاَہلسنّت دَامَتْ بَـرَکاتُہُمُ الْعَالِیَہ اُنہیں یوں دُعائے مدینہ سے نوازتے ہیں  کہ

جو پابند ہے اِجتماعات کا بھی                                   میں دیتا ہوں اُس کو دعائے مدینہ

(وسائل بخشش مرمم،ص۳۶۹)

آئیے!بَطورِ تَرغِیْب ہَفْتَہ وار سُنّتوں بھرے اِجْتِماع میں حاضِری کی ایک  مَدَنی بَہار سُنئےاور اِجْتِماع میں پابندی کے ساتھ شرکت کرنےکی نِیَّت بھی کیجئے،چنانچہ

خوابِ غفلت سے بیداری

کَھڑی شریف(کشمیر)کے ایک عَلاقے پُل عطاری(پُل مَنڈا)میں مقیم اسلامی بھائی دعوتِ اسلامی کے مَدَنی ماحول سے وابستگی سے پہلےبے عَمَلی کی زندگی گزار رہے تھے۔نماز روزوں کے مُعامَلے  میں سُستی کرنااور بَدْاَخلاقی سے پیش آنا اُن کا معمول بن چُکا تھا۔نہ حُقُوْقُاللہ کا پاس تھا نہ ہی حُقوق العِباد یعنی بندوں کے حُقوق کا لحاظ۔ایک اسلامی بھائی اُنہیں ہفتہ وار اِجتماع کی دعوت پیش کرتے مگر وہ ٹال دیا کرتے تھے اور یوں کم و بیش10سال گزر گئے۔ ایک دفعہ اُنہی کے ایک دوست(Friend) نے اُنہیں ہفتہ وار اِجتماع کی ایسی منظر کشی کی کہ اُن کے دل میں بھی شرکت کی خواہش پیدا ہوئی اور اگلے ہی ہفتے وہ اُن کے ساتھ اِجتماع میں جاپہنچے۔اِجتماع میں بہت سُکون ملا۔پُرسوز بَیان  اور رِقّت اَنگیز دعا سے دل میں بہت اَثر ہوا،پھر وہ بھی پابندی سے شریک ہونے لگے۔اَلْحَمْدُ لِلّٰہ عَزَّ  وَجَلَّ اُن کا چہرہ سنّت کے مطابق ایک مُٹّھی داڑھی سے جگمگانے لگا۔ اِجتماعی اِعتکاف کی بَرَکتیں لُوٹنے کا موقع مِلا اور وہ بھی سُنّتوں