سفر نامہ

Image
رات کو مدنی مرکز فیضانِ مدینہ ممباسہ(کینیا) میں ہونے والے ہفتہ وار سنّتوں بھرےاجتماع میں ’’سچ کی برکت‘‘کے موضوع پر بیان کی سعادت ملی جسے ایک مبلغِ دعوتِ اسلامی  سواہلی زبان میں ترجمہ کرتے رہے۔ 
Image
 22مارچ 2019ء کو نمازِ عِشا کے بعد عالَمی مَدَنی مرکز فیضانِ مدینہ میں حضرت سیّدُنا   امام جعفرصادِق رحمۃ اللہ علیہ کے عُرس کے سلسلے میں مَدَنی مذاکرے اور نذر و نیاز کا سلسلہ ہوا۔ 
Image
جامعۃُ المدینہ فیضانِ عطّار نیپال گنج کے اساتذہ نے طلبۂ کرام کے درمیان ذہنی آزمائش کا ایک سلسلہ شروع کیا تھا جس کے سیمی فائنل تقریباً ایک ماہ پہلے ہوچکے تھے، آج نمازِ عِشا کے بعد مجھے اس سلسلے کے فائنل کی میزبانی کی سعادت نصیب
Image
 عُلومُ القراٰن سیمینار میں حاضری کے بعداب بغدادِ مُعَلّٰی سے نیپال جانے کے لئے پہلے دبئی اور وہاں سے نیپال روانگی کا مرحلہ درپیش تھا۔ پاکستانی پاسپورٹ رکھنے والوں کے لئے نیپال کا ویزا اپنے ملک سے لینا ضروری نہیں بلکہ نیپال پہنچ کر
Image
عُلمائے کرام سے ملاقاتیں عُلومُ القراٰن کانفرنس میں شرکت کے لئے بغدادِ مُعَلّٰی حاضری ہوئی تو ائرپورٹ پر یہاں کے مُنتَظِمین نے خُصوصی پروٹوکول کے بعد ہمیں ایک شاندار ہوٹل میں ٹھہرایا۔ نمازِ عصر ایئرپورٹ پر جبکہ نمازِ مغرب ہوٹل میں ادا کی۔ 
Image
عاشقانِ رسول کی مَدَنی تحریک دعوتِ اسلامی دنیا بھر میں نیکی کی دعوت عام کرنے کے لئے جن ذرائع کا استعمال کررہی ہے ان میں سے ایک ”ماہنامہ فیضانِ مدینہ“ بھی ہے۔ میں خود بھی کوشش کرتا ہوں کہ ”ماہنامہ فیضانِ مدینہ“ کا مطالعہ کروں اور دعوتِ اسلامی کے ذِمّہ داران 
Image
 فرینکفرٹ ائیر پورٹ پر چند منٹ میں امیگریشن کاؤنٹر سے فارغ ہوکر  باہر نکلے تو وہاں استقبال کےلئے یوکے اور یورپ سے تشریف لائے ہوئے اسلامی بھائی کافی تعداد میں موجود تھے۔ 
Image
علامہ اسماعیل حقی رحمۃ اللہ تعالٰی علیہ کے مزار شریف کی حاضری کے بعد مغرب سے آدھا گھنٹا پہلے ’’بُرسا‘‘شہر سے واپسی کا سفر شروع ہوا، مغرب کی نماز کشتی میں باجماعت ادا کی۔
Image
تُرکی میں لوگوں کا مذہبی رجحان قابلِ تعریف ہے، ہر طرف مسجدوں کی بہاریں ہیں جن میں نمازیوں کی تعداد پاکستان کی بنسبت بہت زیادہ ہے، ہر نماز کے بعد تقریباً تمام نمازی بڑی محبت سے تسبیحِ فاطمہ پڑھتے ہیں