آخر درست کیا ہے؟

Image
کچھ ماہرینِ نفسیات (Psychologists)کی طرف سے روح کے متعلق کئی دعوے سامنے آئے۔ وہ دعوے اور ان کے جوابات ملاحظہ فرمائیں :
Image
کسی شخص کے انتقال کے بعد اُس کی روح کا اُس کے بدن سے نکل کر کسی دوسرے جسم میں منتقل ہوکر اُسی طرح جسم کے ساتھ تصرُّف کا تعلق قائم کرلینا ، جیسا پہلے جسم کے ساتھ تھا ، یہ عربی میں “ تَنَاسُخ “ اور ہندی میں “ آواگون “ کہلاتا ہے۔
Image
اب رہا یہ سوال کہ اس کے انسانی کارناموں کا صلہ کیا ہوا؟ اس کا ایک جواب یہ ہے کہ کافر کے ظاہری اچھے اعمال کے صلے کی ایک صورت تو ایسی ہے
Image
امام نووی علیہ الرحمہ اس حدیث کی شرح میں فرماتے ہیں : معنی یہ ہے کہ ابن جُدعان کے کافر ہونے کی وجہ سےاس کے اعمال اسے کوئی فائدہ نہیں دیں گے
Image
دینِ اسلام کا قطعی عقیدہ ہے کہ آخرت کی نجات صرف اہلِ ایمان کو نصیب ہوگی اور دنیا میں کوئی کافر کتنا ہی اچھا عمل کرلے ،
Image
دینِ اسلام سے مسلمانوں کی وابستگی ، اس پر فریفتگی اور خواہشات و لذات کے طوفان برپا ہونے کے باوجود ایک بڑی تعداد کا دینی تعلیمات پر عمل ، غیروں کی نظر میں بہت کھٹکتا ہے۔
Image
بعض لوگ یہ تأثر دینے کی کوشش کرتے ہیں کہ  مذہب اور عقل  ایک دوسرے کے مخالف ہیں۔ اگر آپ مذہب پر چلنا چاہتے  ہیں ،