نوجوانوں کے مسائل

Image
حضرتِ سیّدنا ابوطَیِّب طاہر طَبَری شافعی علیہ رحمۃ اللہ القَوی 100سال سے زائد عمر میں بھی ذہنی و جسمانی لحاظ سے تَنْدُرست اور توانا تھے۔ آپ رحمۃ اللہ تعالٰی علیہ سے کسی نے صحت کا راز پوچھا تو ارشاد فرمایا:
Image
ہم اکثر عادتیں(Habits) لاشُعوری طور پر اپناتے ہیں پھر اچّھی  عادتیں ہمیں کامیاب اور بُری ناکام بنانے میں اہم کردار ادا کرتی ہیں کیونکہ (ایک تحقیق کے مطابق)دن بھر میں تقریباً 40 فی صَد کام ہم اپنی مرضی 
Image
میٹھے میٹھے اسلامی بھائیو! کچھ کام ایسے ہوتے ہیں جو ہم کبھی کبھار کرتے ہیں اور کچھ کام وہ ہوتے ہیں جو ہم بار بار کرتے ہیں، کسی کام کو بار بار کرنا ہماری عادت (Habit) کہلاتا ہے،
Image
 نوجوان کی زندگی میں ایک مرحلہ ایسا آتا ہے جب اُسے عملی زندگی میں قدم رکھنا ہوتا ہے۔  اس کے لئے کچھ نوجوان اسلامی بھائی پہلے ہی سے غوروفکر اور مشورےسے اپنی منزل کا تعیّن  کر لیتے ہیں 
Image
ناکامی(Failure) ایسا لفظ ہے جس کا بولنایا سننا بھی اچھا نہیں لگتا،ا گر ہمارے سامنے کوئی شخص اپنے کسی منصوبے یاہدف کا ذکر کرے اور ہم اس سے کہہ دیں کہ تم اس میں ناکام ہوجاؤ گے 
Image
میرے نوجوان اسلامی بھائیو!ہمیں اپنی زندگی میں بےشمار فیصلے (Decisions)کرنے کا موقع ملتا ہے،کچھ فیصلے معمولی نوعیت کے ہوتے ہیں مثلاً آج گھر میں کیا پکے گا؟
Image
ایک شخص نے 20 سال عبادت وریاضت میں گزارے، پھر اس میں منفی تبدیلی(Negative change) آئی اور وہ گناہوں کے راستے پر چل نکلا یہاں تک کہ 20 سال گزر گئے،
Image
اِنسان کئی اچّھی اور بُری عادتوں کا مجموعہ ہوتا ہے جو اُسے فائدہ یا نقصان پہنچاتی ہیں۔ نقصان دینے والی عادَتوں میں سے ایک سُستی بھی ہے۔سُستی کی قَباحت (یعنی بُرائی) کا اِس سے بڑھ کر کیا ثُبوت ہوسکتا ہے کہ
Image
کسی بھی کام کو کرنے سے پہلے اس کے اچّھے یا برے نتائج پر غور کرلینا اِنتِہائی مفید ہے،اس طرح انسان بہت سارے نقصانات سے بچ جاتا ہے