Book Name:163 Madani Phool

اورمِنرَل  واٹر کی خالی بوتلوں وغیرہ پر لات مارنا بے اَدَبی بھی ہے خ پیدل چلنے میں جو قوانین خلافِ شرع نہ ہوں اُن کی پاسداری کیجئے مَثَلاًگاڑیوں کی آمدورفت کے موقع پر سڑک پار کرنے کیلئے  مُیسَّر ہو تو ’’زَیبرا کراسنگ‘‘یا’’اَووَر ہیڈپُل‘‘ ا ستِعمال کیجئے خ جس سَمت سے گاڑیاں آرہی ہوں اُس طرف دیکھ کر ہی سڑک عُبور کیجئے،اگرآپ بیچ سڑک پر ہو ں اورگاڑی آرہی ہو توبھاگ پڑنے کے بجائے موقع کی مناسبت سے وَہیں کھڑے رہ جایئے کہ اس میں حفاظت زیادہ ہے نیز ریل گاڑی گزرنے کے اَوقات میں پَٹْریاں عُبور کرنااپنی موت کو دعوت دینا ہے، رَیل گاڑی کو کافی دُور سمجھ کر گزرنے والے کوجلدی یا بے خیالی میں کسی تار وغیرہ میں پاؤں الجھ جانے کی صورت میں گرنے اور اوپر سے ریل گاڑی گزر جانے کے خطرے کو پیشِ نظر رکھنا چاہئے نیز بعض جگہیں ایسی ہوتی ہیں جہاں پٹری سے گزرنا ہی خلافِ قانون ہوتاہے خصوصا اسٹیشنوں پر ، ان قوانین پر عمل کیجئے خ عبادت پر قوت حاصِل کرنے کی نیّت سے حتَّی الامکان روزانہ پون گھنٹہ ذِکر ودُرود کے ساتھ پیدل چلئے اِنْ شَآءَاللہ عَزَّ  وَجَلَّ صحت اچھی رہے گی۔ چلنے کا بہتر طریقہ یہ ہے کہ شروع میں 15مِنَٹ تیز تیز قدم ،پھر 15 مِنَٹ درمیانہ، آخِر میں 15مِنَٹ پھر تیز قدم چلئے ،اس طرح چلنے سے سارے جسم کو ورزِش ملے گی، اِنْ شَآءَاللہ عَزَّ  وَجَلَّ نظامِ انہضام (اِن۔ہِ۔ضام یعنی ہاضِمہ )دُرُست رہے گا، ریح (GAS)، قبض، موٹاپا، دل کے اَمراض اور دیگربے شمار بیماریوں سے بھی اِنْ شَآءَاللہ عَزَّ  وَجَلَّ حفاظت ہو گی۔

 

 



Total Pages: 40

Go To