Book Name:Chal Madina ki Saadat mil gayi

نہ صِرف دعوت دی بلکہ اپنے ساتھ لے جاناشُروع کردیا۔بھائی جان سُنّتوں بھرے اجتماع سے واپَسی پراجتماع کی تفصیلات بیان کرتے جن میں سیِّدی اعلیٰ حضرت علیہ رحمۃربِّ العِزۃ کاذِکرِخیرسننے کوملتاجس کی وجہ سے مجھے دعوتِ اسلامی کے مَدَنی ماحول سے اپنائِیَّت سی محسوس ہونے لگی۔ اَلْحَمْدُلِلّٰہ عَزَّ وَجَلَّ اسی احساس نے مجھے پہلی بار۱۴۰۵ھ بمطابق1985ء کےسالانہ سنّتوں بھرے اجتماع کی خُصُوصی نِشَست میں شرکت پراُبھارا۔چُنانچِہ میں بھی اسلامی بہنوں کے ساتھ اجتماع میں شریک ہوئی جہاں میں نے پردے میں رَہ کر سنّتوں بھرابیان سُنااوردُعامانگی۔اَلْحَمْدُلِلّٰہ عَزَّ وَجَلَّ اس اجتماع میں شرکت کی برکت سے مجھے گناہوں سے توبہ کرنے کی سعادت نصیب ہوئی اورفکرآخِرت کا جذبہ ملا۔جس پراستِقامت پانے کے لیے میں نے مَدَنی اِنعامات پرعمل کرناشُروع کردیا۔اَلْحَمْدُلِلّٰہ عَزَّ وَجَلَّ مَدَنی انعامات کی برکت سے  مجھے اپنے محرم کے ساتھ چل مدینہ کی سعادت بھی نصیب ہوگئی۔ (چل مدینہ دعوتِ اسلامی کی اصطلاح ہے اس سے مراداس مدنی قافلہ کے ساتھ حج وزیارتِ مدینہ کی سعادت حاصل کرناہے جس میں بنفس نفیس امیرِاہلسنّت، بانی ِدعوت ِاسلامی دَامَتْ بَرَکاتُہُمُ الْعَالِیَہبھی شامل ہوں )

اللّٰہ عَزَّ وَجَلَّ  کی امیرِاَہلسنّت پَررَحمت ہواوران کے صد قے ہماری مغفِرت ہو

صَلُّواعَلَی الْحَبِیب!                  صلَّی اللّٰہُ تعالٰی عَلٰی محمَّد

 {2} گناہوں کے دلدل میں

          باب المدینہ (کراچی) کی مقیم ایک اسلامی بہن کے تحریری بیان کالُبِّ لُباب



Total Pages: 27

Go To