Book Name:Chanday Kay Baray Main Sawal Jawab

زکوٰۃ غیرِ مَصرَف میں  خَرچ کر دی ، اُس کا حل؟

سُوال :  مسئلہ معلوم نہ ہونے کی وجہ سے اگر کسی چندہ وصول کرنے والے نے زکوٰۃ یا فِطرہ بِغیرحِیلۂ شَرعی کے غیرِ مَصرَفِ زکوٰۃ و فِطرہ میں  خرچ کرڈالا ہوتو اس کی توبہ کاکیا طریقہ ہے ؟

جواب :  یہاں  جَہالت عُذر نہیں ، اِس نے کیوں  نہیں  سیکھا! کہ جس کو چندہ جمع کرنا ہو یا چندہ خرچ کرنا ہو اُس کیلئے اِس کے ضَروری مسائل جاننا فرض ہے ۔ نہیں  سیکھا تو فرض کا تارِک اور گنہگار ہوا ۔ باِلفرض کسی نے زکوٰۃ یا فِطرہ کی رقم کو بِغیرحِیلۂ شَرعی غیر مَصرَفِ زکوٰۃ و فِطرہ میں  خرچ کرڈالا تو توبہ کے ساتھ ساتھ اُس پر تاوان بھی لازِم آئیگا  ۔ مَثَلاً کسی نے دعوتِ اسلامی کو زکوٰۃ دی اور ذمّہ دار نے بِغیر حیلہ کئے وہ رقم تعمیرِ مسجِد یا مدرِّس کی تنخواہ یا اسی طر ح کے نیک کاموں  میں  صَرف کردی تو توبہ کے ساتھ ساتھ اُسے پلّے سے تاوان ادا کرنا ہو گا اگرچِہ وہ رقم لاکھوں  بلکہ کروڑوں  کی ہو ، اِس کیلئے فَقَط زبانی توبہ کافی نہیں ۔

تاوان کی رقم نہ ہو تو ۔ ۔ ۔  ۔ ؟

سُوال : جس نے لاکھوں  روپے کی زکوٰۃ بِغیرحِیلے کے غیرِمصرَف میں  صَرف کردی ہو اور اب مسئلہ معلوم ہواہو مگر تاوان دینے کیلئے رقم نہ ہو تو کیا کرے ؟

جواب : اگر یہ اب فقیرِشَرعی ہے تو اُس پر جتنا تاوان ہے اُتنی زکوٰۃ دیکر اُس کو اِس کا مالِک بنادیا جائے ، اب جن جن کی زکوٰۃ کا اس نے غَلَط استِعمال کرڈالا تھا  مذکورہ طریقۂ کار کے مطابِق تاوان ادا کرے ۔ یعنی جن جن صاحِبان کی زکوٰۃ تھی اُن کو یا اُن کے وکیلوں  کولوٹائے ۔ یہ بھی ہو سکتا ہے کہ کوئی اور فقیرِشَرعی زکوٰۃ و فِطرہ کی رقم اپنی مِلک بنا لینے کے بعد جس پر تاوان چڑھا ہوا ہواُس کو تُحفے میں  دیدے یا اِس کا قبضہ ہونے کے بعد اُس کی اجازت لیکر اُس کی طرف سے تاوان ادا کر دے  ۔ اوردونوں  صورَتوں  میں  توبہ بھی کرے ۔  یہ حِیلہ اس لئے بیان کیا گیا کہ لاعلمی کی وجہ سے حُسنِ نیّت کے باوُجُود جو اس گناہ اور تاوان میں  مبتلا ہوگئے انہیں  سَہولت ہو جائے ۔ یہ نہیں  کہ اسحِیلے کوبُنیاد بنا کر زکوٰۃ و صَدَقات وغیرہ کو مَعَاذَ اللہ عَزَّوَجَلَّ ناجائز و حرام طریقے سے استِعمال کرنا شروع کردیا جائے ! اگر اس نیّت سے فِعلِ حرام کا اِرتِکاب کیا کہ بعد میں  توبہ کرلوں  گا اور حِیلے  کے ساتھ تاوان سے بھی چُھٹکارا حاصل کرلوں  گا تو بعض صورَتوں  میں لُزومِ کفر کا حکم بھی ہوسکتا ہے ۔

اگر کسی سیِّد پر تاوان چڑھ گیا ہو تو ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ؟

سُوال : اگر کسی سیِّدصاحِب نے یہ بھول کی ہوتو کیاکریں  کیونکہ سیِّدزادے سے تو زکوٰۃ کاحِیلہ بھی نہیں  کرواسکتے ؟

 



Total Pages: 50

Go To