Book Name:Bad Fajar Madani Halqa

مُعَلِّم بنانا بھی آسان ہے۔

6- رابطے کا ذریعہ

نگرانِ ذیلی مُشَاوَرَت بعدِ فَجْر مختصراً مدنی مشورہ کرکے روزانہ کے مدنی کاموں کا جائزہ بھی لے سکتے ہیں اوراجتماعی فِکْرِ مدینہ کی بھی ترکیب ہو سکتی ہے۔

7- نمازِ اشراق و چاشت

نَمازِ اِشْرَاق و چاشت پر پابندی نصیب ہوتی ہے کہ نَمازِ اِشْرَاق کی فضیلت میں مَرْوِی ہے کہ اللہ پاک کے مَـحْبُوب صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمنے اِرشَاد فرمایا : جس نے فَجْر کی نَماز ادا کی پھر طُلُوعِ آفتاب تک اللہ پاک کا ذِکْر کرتا رہا پھر دو۲ یا چار۴ رکعتیں اَدا کیں ، اس کے بَدَن کو جہنّم کی آگ نہ چُھو سکے گی۔[1] اسی طرح نَمازِ چاشت کی فضیلت کے مُتَعَلِّق سرکارِ دو۲عالَم صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم اِرشَاد فرماتے ہیں : جو چاشت کی دو۲ رَکعتیں پابندی سے اَداکرتارہے اس کے گناہ مُعاف کر دئیے جاتے ہیں اگرچِہ سمندر کی جھاگ کے برابر ہوں۔[2]

8- فہمِ قرآن

قرآن فہمی بَہُت بڑی عِبَادَت و سَعَادَت ہے۔ بلکہ قرآن کا مسلمانوں پر یہ حَق ہے کہ وہ اسے سمجھیں اور اس میں غور و فِکْر کریں مگر اَفْسَوس! فی زمانہ مسلمانوں کی ایک تعداد اسے سمجھنے اور اس میں غور و فِکْر سے غافِل ہے۔چنانچہ بَعْدِ فَجْر مَدَنی حلقے میں شِرْکَت کی بَرَکَت سے جہاں قرآنِ کریم کی روشن آیات کی  تِلاوَت سننے کی سَعَادَت و فضیلت حاصِل  ہوتی ہے ، وَہیں ترجمہ و تفسیر سُن کر قرآنِ کریم کا فہم(یعنی سمجھ بوجھ)بھی حاصِل ہوتی ہے۔

9- مسجد میں بیٹھنے کا شرف

اَلْحَمْدُ لِلّٰہ!بَعْدِ فَجْر مَدَنی حلقے کے شرکا کو اللہ پاک کے گھر میں بیٹھنے کا شَرَف حاصِل ہوتا ہے کہ جتنی دیر یہاں بیٹھیں گے گناہوں وغیرہ سے بچے رہیں گے۔ جیسا کہ مَنْقُول ہے کہ ایک بزرگ کو کسی نے دیکھا کہ وہ مَسْجِد میں بیٹھے اپنے نَفْس کو یوں سمجھا رہے تھے : بیٹھ جا! کہاں اور کیوں جانا چاہتا ہے؟ کیا مَسْجِد سے بھی بہتر کوئی جگہ ہے جہاں جانا چاہتا ہے؟ذرا دیکھ!یہاں رحمتوں کی کیسی برسات ہے؟ جبکہ تُو چاہتا ہے کہ باہر جاکر کبھی کسی کے گھر کو دیکھے ، کبھی کسی کے گھر کو۔[3]

10- اچھی صُحبت کی برکتیں

بَعْدِ فَجْر مَدَنی حلقے میں شِرْکَت کا ایک فائدہ یہ بھی ہے کہ اَچّھے اور نیک لوگوں کی صُحْبَت نصیب ہوتی ہے جس کے بَہُت فضائل و برکات ہیں ، نیک لوگوں کی صُحْبَت اور ان کا قُرْب نیک ہی نہیں بناتا ، بلکہ ظاہِر و باطِن کی اِصْلَاح کا باعِث بھی بنتا ہے ، دل گناہوں سے بیزار اور نیکیوں کی طرف مائل رہتا ہے۔ صُوفیائے کِرام (رَحِمَہُمُ اللّٰہ ُ السَّلَام) فرماتے ہیں کہ نیک صُحْبَت ساری عِبادات سے اَفْضَل ہے ، دیکھو صحابۂ کرام (عَلَیْہِمُ الرِّضْوَان) سارے جہاں کے اَوْلِیا(رَحْمَۃُ اللّٰہ ِتَعَالٰی عَلَیْہِم)سے اَفْضَل ہیں کیوں؟ اس لئے کہ وہ صُحْبَت یافتہ جنابِ مصطفٰے صَلَّی اللّٰہُ عَلَیْہِ وَسَلَّم ہیں۔[4]

مرکزی مجلس شوریٰ کے مدنی مشوروں سے ماخوذ مدنی پھول

٭ تمام ذِمّہ دارانِ دَعْوَتِ اِسْلَامی کو تاکید ہے کہ بعدِ فجر مدنی حلقہ لگایا کریں۔[5]

٭ بَعْدِ فَجْر مَدَنی حلقہ ، مَسْجِد دَرْس اور صدائے مدینہ میں آپ کے عَلاقے کے لوگوں کا تَحَفُّظ ہے۔[6]

نشے باز کی اصلاح کا راز

مرکزالاولیا (لاہور ، پاکستان) کے علاقے چاہ مِیراں کے مقیم ایک اسلامی بھائی اپنی زِنْدَگی میں مَدَنی اِنْقِلاب برپا ہونے کے اَحْوَال کچھ یوں بیان کرتے ہیں کہ صُحْبَتِ بد کی وجہ سے میرے اَطوار و کردار میں اس قَدْر بگاڑ پیدا ہو گیا تھا کہ نہ مجھے چھوٹوں پر شَفْقَت کا کوئی اِحْسَاس تھا اور نہ ہی بڑوں کے اَدَب و اِحْتِرام کا کوئی پاس۔ دن بھر آوارہ دوستوں کے ساتھ آوارگی میں مَست رہتا اور شب بھر مُـخْتَلِف گناہوں کا سلسلہ جاری رہتا۔ وَقْت کے ساتھ ساتھ بُرائیوں کی دَلْدَل میں دھنستا چلا جا رہا



[1]     شعب الایمان ۲۳- با ب فی الصیام ، فصل فیمن فطر صائم ، ۳ / ۴۲۰ ، حدیث :  ۳۹۵۷

[2]      ابن ماجه ، کتاب اقامة الصلاة ...الخ ، ، باب ما جاء فی صلاة الضحی ، ص۲۲۳ ، حدیث : ۱۳۸۲

[3]    ذم الھوٰی ، الباب الثالث ، ص۴۳

[4]    مراٰۃ المناجیح ، باب الله کا ذکر اور اس سے قرب حاصل کرنا ، پہلی فصل ، ٣ / ٣١٢

[5]     مدنی مشورہ مرکزی مجلس شوریٰ ، ۲۷ محرم الحرام تا ۲ صفر المظفر ۱۴۳۲ھ ، 3تا7جنوری2011

[6]     مدنی مشورہ مرکزی مجلس شوریٰ ، یکم تا۷صفر المظفر ، 29جنوری تا4فروری2009



Total Pages: 15

Go To