Book Name:Mufti e Dawateislami

طریقت، امیرِ اہلسنّت دامت برکاتہم العالیہ کا رسالہ پڑ ھ کر سنانے والے مبلّغ کون تھے ! اگر نہیں جانتے تو سنئے وہ اور کوئی نہیں دعوتِ اسلامی کے مرحوم رُکنِ شوریٰ مفتیٔ دعوتِ اسلامی الحاج محمد فاروق العطاری اَلْمَدَنی علیہ رحمۃ اللہ الغنی تھے ۔

{اللہ عَزَّوَجَلَّ کی اِن پر رحمت ہو۔۔ا ور۔۔ اِن کے صدقے ہماری مغفرت ہو۔آمین بجاہ النبی الامین صَلَّی اللّٰہ تعالٰی علیہ واٰلہ وسلَّم }

اِنفرادی کوشش :

دعوتِ اسلامی کی مرکزی مجلس ِ شوریٰ کے نگران مدظلہ العالی کا بیان ہے کہ

’’بہت عرصہ پہلے کی بات ہے کہ مرحوم مدرسۃ المدینہ کنز الایمان کی جائے نماز میں اِمامت فرماتے تھے ۔ ایک علاقائی تنازع کو حل کرنے کے بارے میں ہونے والے مشورے میں کسی فرد سے کلمۂ کفر نکل گیا ۔آپ نے اسی وقت تمام گفتگو رُکوا کر کسی مفتی صاحب کو فون کیا اور مسئلے کی تہہ میں گئے ۔ پھر قائل کو تجدید ایمان کروا ئی اور تجدید ِنکاح کی تاکید کی۔ان کی اس جرأت اور خیر خواہی کے جذبے نے بہت متاثر کیا۔‘‘

مفتی ٔدعوت ِ اسلامی رحمۃ اللہ تعالیٰ علیہ اپنے دارالافتاء میں فون پر یا بالمشافہ سائل کی بات کو توجہ سے سنتے ہوئے آسان اور عام فہم انداز میں جواب دینے کے ساتھ نیکی کی دعوت بھی دیا کرتے تھے ۔چند واقعات ملاحظہ ہوں …

(۱) دارالافتاء نورالعرفان کھارادر بابُ المدینہ کراچی میں ایک نوجوان اکثر ان کے پاس آیا کرتا اور کافی دیر تک وہاں بیٹھا رہتا اور سوالات پوچھتا رہتا ۔ مفتی صاحب رحمۃ اللہ تعالیٰ علیہ اس کے سوالات کے جوابات بھی ارشاد فرمایا کرتے اور اس پر


 

 



Total Pages: 89

Go To