Book Name:Doodh Pita Madani Munna

ہو گئے!  مدنی منے کی سمجھ میں آ گیا اور اس نے برے دوستوں کی صحبت میں بیٹھنے سے توبہ کرلی ۔

    میٹھے میٹھے مَدَنی منو اورمَدَنی منیو!  آپ بھی برے دوستوں سے بچ کر رہئے اور ایسوں کے ساتھ ہرگز نہ اٹھیں بیٹھیں جو نمازیں چھوڑنے والے،   فلمیں دیکھنے والے ،   گانے سننے والے ،   بڑوں کی بے ادبی کرنے والے ،  دوسروں کو ستانے والے اور گالیاں بکنے والے ہوں بلکہ نمازوں کے پابند ،  سنتوں پر عمل کرنے والوں ،   بڑوں کا ادب کرنے والوں اورنیکی کی باتیں کرنے والوں کے پاس بیٹھئے ،   نیکوں کی صحبت آپ کو مزید   (یعنی اور زیادہ )  نیک بنادے گی ،   اِنْ شَآءَ اللہ عَزَّ  وَجَلَّ۔

صَلُّوا عَلَی الْحَبِیْب!                                         صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلٰی مُحَمَّد

دودھ کے مَدَنی پھول

دودھ قراٰنِ کریم کی روشنی میں

        پارہ سُوْرَۃُ النَّحْلِآیت نمبر 66میں ہے:

وَ اِنَّ لَكُمْ فِی الْاَنْعَامِ لَعِبْرَةًؕ-نُسْقِیْكُمْ مِّمَّا فِیْ بُطُوْنِهٖ مِنْۢ بَیْنِ فَرْثٍ وَّ دَمٍ لَّبَنًا خَالِصًا سَآىٕغًا لِّلشّٰرِبِیْنَ  (۶۶)  ترجمۂ کنز الایمان  ([1] ور بیشک تمہارے لئے چوپایوں میں نگاہ حاصل ہونے کی جگہ ہے ہم تمہیں پلاتے ہیں اس چیز میں سے جو ان کے پیٹ میں ہے گوبر اور خون کے بیچ میں سے خالص دودھ گلے سے سہل اترتا پینے والوں کیلئے

دودھ کے بارے میں دو فرامین مصطَفٰے  صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ

{۱}گائے کا دودھ استعما ل کرو   (یعنی پیا کرو)  کیونکہ یہ ہر درخت سے غذا حاصل کرتی ہے اور اس میں ہر بیماری سے شفا ہے ۔    (مُسندِ امامِ اعظم ص۲۰۷،  اَلمُستَدرک ج ۵ ص ۵۷۵ حدیث ۸۲۷۴  {۲}جب کوئی شخص دودھ پئے تو کہے  ( یعنی یہ دُعا پڑھے)  : ’’اَللّٰہُمَّ بَارِکْ لَنَا فِیْہِ وَزِدْنَا مِنْہ۔ ‘‘  (ترجمہ:اےاللہ عَزَّوَجَلَّ!  ہمارے لیے اس میں برکت عطا فرما اور ہمیں مزید عطا فرما)   کیونکہ دودھ  کے سوا ایسی کوئی چیز نہیں جو کھانے اور پانی دونوں کی جگہ کفایت کرے۔    (شُعَبُ الْاِیمان ج۵ص۱۰۴حدیث۵۹۵۷یعنی صرف دودھ میں وہ نعمت ہے جو بھوک وپیاس دونوں کو رفع  (دور)   کرتا ہے،   لہٰذا یہ غذا بھی ہے اور پانی بھی۔   (مراٰۃ المناجیح ج۶ص۸۰) 


 

 



[1]     ترجمۂ کنزُالعِرفان: اور بیشک تمہارے لیے مویشیوں میں غوروفکر کی باتیں ہیں (وہ یہ کہ) ہم تمہیں ان کے پیٹوں سے گوبر اور خون کے درمیان سے خالص دودھ (نکال کر) پلاتے ہیں جو پینے والے کے گلے سے آسانی سے اترنے والا ہے۔



Total Pages: 15

Go To