Book Name:Islam kay Bunyadi Aqeeday

عمدۃ القاری

امام بدر الدین ابو محمد محمود بن احمد عینی متوفی ۸۵۵ھ

دارالفکر بیروت ۱۴۱۸ھ

فیض القدیر

علامہ محمد عبد الرء ُوف مناوی متوفی۱۰۳۱ھ

دارالکتب العلمیۃ بیروت۱۴۲۲ھ

منح الروض الأزھر

شیخ علی بن سلطان المعروف بملا علی قاری متوفی۱۰۱۴ھ

باب المدینہ کراچی

 الفتاوی الرضویۃ

اعلیٰ حضرت امام احمد رضاخان متوفی ۱۳۴۰ھ

رضا فاؤنڈیشن لاہور

بہارشریعت

مفتی محمد امجد علی اعظمی متوفی۱۳۶۷ھ

مکتبہ المدینہ کراچی

الشمائل المحمدیہ

امام محمد بن عیسیٰ الترمذی متوفی۲۷۹ھ

داراحیاء التراث بیروت

المواہب اللدنیۃ

شہاب الدین احمد بن محمد قسطلانی متوفی ۹۲۳ھ

دارالکتب العلمیۃ بیروت۱۴۱۶ھ

شرح المواہب

محمدزرقانی بن عبدالباقی بن یوسف متوفی۱۱۲۲ھـ

دارالکتب العلمیۃ۱۴۱۷ھـ

٭٭٭٭٭٭

 

جَنّت کی دُعا

    حضرت سَیِّدُنا اَنس بن مَالِک رَضِیَ اللّٰہُ تَعَالٰی عَنْہ بیان کرتے ہیں کہ نبیوں کے سُلطان، سرورِ ذیشان، سردارِ دو جہان صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمنے ارشاد فرمایا:  جس نے تین مرتبہ اللّٰہ عَزَّوَجَلَّ سے جنت کا سوال کیا تو جنت دُعا کرتی ہے کہ یااللّٰہ عَزَّوَجَلَّ اس کو جنت میں داخل کردے اور جس شخص نے تین مرتبہ دوزخ سے پناہ مانگی تو دوزخ دعا کرتی ہے کہ یااللّٰہ عَزَّوَجَلَّ  اس کو دوزخ سے پناہ میں رکھ۔  (ترمذی، کتاب صفۃ الجنۃ،  باب ماجاء فی صفۃ الجنۃ ونعیمہا، ۴ / ۲۵۷،  حدیث: ۲۵۸۱ )


 

 



Total Pages: 55

Go To