$header_html

Book Name:Jame Ul Ahadees Jild 1

حدیثیں  گڑھیں، کما ارشد الیہ الامام احمد بن حنبل رحمۃ ا اللہ تعالی علیہ ۔

٭      تمام کتب  و تصانیف اسلامیہ  میں استقرائے تام کیا  جائے اور اس کا کہیں  پتہ نہ چلے  یہ صرف اجلۂ  حفاظ ائمہ  شان  کا کام  تھا  جسکی لیاقت صدہا سال  سے معدوم ۔( ۶۸)

 دواعی  وضع:۔

       کسی  نے تقرب الی اللہ کی غرض سے غلبہ جہل کے باعث۔کسی  نے  اپنے مذہب کی فوقیت میں تعصب و عناد کی خاطر۔ کسی نے بددینی  پھیلانے کے  لئے۔ کسی نے دنیا  طلبی اور   خواہش نفسانی  کے پیش نظر۔ اور کسی نے حب جاہ اور  طلب شہرت کے لئے    یہ  مذموم فعل  اپنا  وطیرہ  بنایا  تھا۔(۶۹)

        بعض مفسرین نے بلا صراحت وضع ایسی  روایات  لی  ہیں ۔ وضع کا زیادہ  تر  تعلق   اقوام  و افراد کی منقبت و مذمت،انبیاء سابقین  کے قصوں،  بنی اسرائیل   کے احوال ،کھانے پینے کی چیزوں ،جانوروں ،جھاڑ پھونک ،  دعا اور نوافل کے  ثواب سے  رہا ہے۔( ۷۰)

  تصانیف فن

 ٭     تذکرۃ الموضوعات للمقدسی ،                      م ۵۰۷

 ٭     کتاب الموضوعات لا بن الجوزی،                    م ۵۹۷

 ٭     اللآ لی المصنوعۃ فی الاحادیث الموضوعۃ للسیوطی،    م ۹۱۱

 ٭     تنز یہ الشریعۃ المرفوعۃ عن الاحادیث الشنیعۃ الموضوعۃ  للکتانی ،

                                                       م ۹۶۳

 متروک

 تعریف :۔  سند و حدیث  میں کوئی  راوی  متہم  با لکذب ہو۔

       اسباب اتہام  میں  ایک اہم سبب یہ ہوتا ہے کہ  وہ تنہا ایسی روایت کرتا  ہے جو قرآن و حدیث سے  مستنبط قواعد کے خلاف ہو ۔

       دوسرا سبب اسکی عام گفتگو میں جھوٹ بولنے کی عادت مشہور  ہو  جبکہ  حدیث کے بیان  میں اسکی یہ عادت



Total Pages: 604

Go To
$footer_html