Book Name:Jame Ul Ahadees Jild 1

۰

نحمدہ ونصلی ونسلم علی رسولہ الکریم  و علی آلہ و اصحابہ اجمعین 

اما بعد!

ُٓ       پاک و ہند کے فقہاء اور محدثین میں علم و تحقیق کے اعتبار سے امام احمد رضا بریلوی رحمۃ اللہ تعالیٰ علیہ کی شخصیت کوہ ہمالہ کی حیثیت رکھتی ہے ۔ اس قدر جامع العلوم ،و سیع النظر اور کثیر التصانیف اور متبحر ان کے دور سے لیکر آج تک کوئی دوسرا عالم نظر نہیں آتا  ۔ طرق حدیث ، مراتب احادیث ، اسماء الرجال ، فقہ کے متون ، شروح اور حواشی پر ان کی نظر اتنی وسیع ہے کہ انکی تصانیف کا مطالعہ کرنے والے بڑے بڑے علماء حیران رہ جاتے ہیں  ،عموما ًکسی بھی مسئلہ پر گفتگو کرتے ہیں تو پہلے قرآن پاک کی آیات سے پھر احادیث مبارکہ سے استدلال کرتے ہیں ، اس کے بعد ائمہ مجتہدین اور فقہاء اسلام کے ارشادات پیش کرتے ہیں اور لطف کی بات یہ ہے کہ امام اعظم

ابو حنیفہ کی تقلید کا دامن بھی ہاتھ سے نہیں چھوڑتے ۔

       فتاوی رضویہ فقہ حنفی کا انسائکلو پیڈیا تو ہے ہی ، اس میں احادیث مبارکہ کا بڑا ذخیرہ بھی محفوظ کر دیا گیا ۔ ضرورت تھی کہ فتاوی میں پیش کردہ احادیث کو الگ  جمع کر کے مرتب کیا جاتا ، ملک العلماء مولانا علامہ ظفر الدین بہاری رحمۃ اللہ تعالیٰ (والدماجدڈاکٹر مختارالدین وائس چانسلر مولانا ظفر الحق یونیورسٹی ، پٹنہ ) نے اس پہلو پر کام کیا تھا اور صحیح بہاری کے نام سے چھہ جلدیں مرتب کی تھیں جس میں فتاوی رضویہ کے علاوہ دیگر کتب حدیث سے بھی  احادیث شمار کی تھیں ،اس کی دوسری جلد حضرت ملک العلماء کی کوشش سے چھپ گئی تھی ، پہلی جلد چھپنے والیہے۔

       ۱۴۲۰ھ/۱۹۹۹ء میں فاضل علامہ مولانا محمد عیسی رضوی قادری زید علمہ و عملہ مدر س جامعہ رضویہ مظہر العلوم گرسہائے گنج فرخ  آباد، یو پی کی سالہا سال کی محنت کے نتیجے میں تیار ہونے والی کتاب ’’ امام احمد رضا اور علم حدیث ‘‘ کے نام سے رضوی کتاب گھر ، دہلی نے تین

جلدوں میں شائع کی ہے ، جبکہ اس کی چوتھی جلد عنقریب طبع ہونے والی ہے۔

       پیش نظر کتاب’’ المختارا ت الرضویہ من الاحادیث النبویہ ، جامع الاحادیث‘‘ کے نام سے آپ کے سامنے ہے جو امام احمد رضا محدث بریلوی رحمۃ اللہ تعالیٰ علیہ کی ساڑھے تین سو تصانیف سے انتخاب کردہ احادیث پر



Total Pages: 604

Go To