Book Name:Jame Ul Ahadees Jild 1

اہل کفر کو ختم کردیاہے ۔لیکن اسکے باوجود ہم اس کام کو ترک نہیں کرینگے جو ہم حضور  صلی اللہ  تعالیٰ علیہ وسلم کے عہد ہمایوں میں کیا کرتے تھے۔( ۵۵)

        حضرت سعید بن مسیب رضی اللہ تعالیٰ عنہ فرماتے ہیں ۔

       میں نے امیرالمومنین حضرت عثمان غنی رضی اللہ تعالیٰ عنہ کوایک مجلس میں تشریف فرمادیکھا ۔آپ نے آگ پر پکاہوا کھانا منگایا اور اسے تناول فرمایا ، پھرنماز کیلئے کھڑے ہوئے، نماز پڑھی اورفرمایا : میں اس انداز میں بیٹھا جو حضور سید عالم  صلی اللہ  تعالیٰ علیہ وسلم کے بیٹھنے کاانداز تھا ، میں  نے  اس طرح  کھایا  جس طرح  حضور  تناول  فرماتے  تھے  اور  میں نے  اس  طرح  نماز پڑھی جس طرح حضور نماز پڑھتے تھے ۔

       مولائے کائنات امیرالمومنین حضرت علی کرم اللہ تعالیٰ وجہہ الکریم فرماتے تھے ۔

       کنت اری ان باطن القدمین احق بالمسح من ظاہر ھما حتی رأیت رسول اللہ صلی اللہ تعالیٰ علیہ وسلم یمسح ظاہرھما ۔

        میری رائے یہ تھی کہ پائوں کے نیچے والے حصہ پرمسح کرنا اوپر والے حصہ پر مسح کرنے کی بہ نسبت زیادہ بہتر ہے حتی کہ میں نے حضور اقدس  صلی اللہ  تعالیٰ علیہ وسلم کو پائوں کے اوپر والے حصہ پر مسح کرتے دیکھا ۔

       گویا باب مدینۃ العلم نے  اپنے حبیب  صلی اللہ  تعالیٰ علیہ وسلم کی سنت پر اپنی رائے کوقربان کردیا۔ مومن کاکام ہی یہ ہے۔

عقل قرباں کن بہ پیش مصطفی( ۵۶)

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

۵۵۔    ضیاء  النبی                   ۷/۹۴

 ۵۶۔     ضیاء النبی،                   ۷/۹۲

        حضرت علی بن ربیعہ فرماتے ہیں ۔

       امیرالمومنین حضرت علی مرتضی کرم اللہ تعالیٰ وجہہ الکریم کی سواری کیلئے ایک جانور حاضر کیاگیا ،جب آپ نے رکاب میں پائوں رکھا تو پڑھا ۔

       بسم اللہ ۔

       جب آپ چوپائے پر سیدھے بیٹھ گئے توپڑھا ۔

       الحمد للہ سبحان الذی سخرلنا ہذا وماکنا لہ مقرنین وانا الی ربنا لمنقلبون ۔

 



Total Pages: 604

Go To