Book Name:Nisab-ul-Mantiq

 

 

Description: C:UsersCCEDesktopCapture 8.PNG
 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 


مشق

سوال نمبر1 :  ۔ قیاسِ اقترانی کی تعریف اور اس کی اقسام کی وضاحت کریں  ۔

سوال نمبر2 :  ۔ ان اصطلاحات منطق کی تعریفات لکھیں  ۔

مقدماتِ قیاس ۔  اکبر ۔  اصغر ۔  صغری ۔  کبری ۔  حد ِاوسط ۔ قرینہ و ضرب ۔  شکل ۔

سوال نمبر3 :  ۔ اشکال اربعہ کی تعریفات تحریر کریں  ۔

سوال نمبر4 :  ۔ شکل اول کے نتیجہ دینے کی شرائط و ضروب مع امثلہ لکھیں  ۔

سوال نمبر5 :  ۔ شکل ثانی ا ور شکل ثالث کے نتیجہ دینے کی شرائط و ضروب مع امثلہ لکھیں  ۔

 

 

٭…٭…٭…٭

٭…امور نافعہ ضروریہ…٭

(1)…حساس :  قوت باصرہ، سامعہ، ذائقہ، شامہ، لامسہ والا ۔

(2)…ناطق :  قوت فکریہ والا ۔

(3)…متحرک بالارادہ :  اختیاری حرکت والا ۔

(4)…صاہل :  ہنہنانے کی قوت رکھنے والا ۔

(5)…ناہق :  رینگنے کی قوت رکھنے والا ۔

(6)…نابح :  بھونکنے کی قوت رکھنے والا ۔

 

سبق نمبر :  44

{…قیاس استثنائی…}

            وہ قیاس جس میں نتیجہ یا نتیجہ کی نقیض بعینہ مذکورہو، نیز اس میں حرفِ استثناء بھی مذکور ہو ۔  

فائدہ :

            اس قیاس میں پہلا قضیہ شرطیہ اوردوسرا حملیہ ہوتاہے ۔  جیسے اِنْ کَانَتِ الشَّمْسُ طَالِعَۃً فَالنَّھَارُ مَوْجُوْدٌ لٰکِنَّ الشَّمْسَ طَالِعَۃ، فَالنَّھَارُ مَوْجُوْدٌ ۔  

وضاحت :

            اس مثال میں نتیجہ ’’فالنھار موجود‘‘ بعینہ قیاس کے مقدمات میں موجود ہے لہذا یہ قیاسِ استثنائی ہے ۔  

 



Total Pages: 54

Go To