Book Name:Waliullah Ki Pehchan

پہلے اِ سے پڑھ لیجیے!

اَلْحَمْدُ لِلّٰہ  عَزَّوَجَلَّ  تبلیغِ قرآن وسنت کی عالمگیر غیر سیاسی تحریک دعوتِ اسلامی کے بانی، شیخِ طریقت، امیرِاہلسنّت حضرت علّامہ مولانا ابو بلال  محمّد الیا س عطاؔر قادری رضوی ضیائی دَامَتْ بَرَکاتُہُمُ الْعَالِیَہ نے اپنے مخصوص انداز میں سنتوں بھر ے بیانات ، عِلْم وحکمت سے معمور مَدَ نی مذاکرات اور اپنے تربیت یافتہ مبلغین کے ذَریعے تھوڑے ہی عرصے میں لاکھوں مسلمانوں کے دلوں میں مدنی انقلاب برپا کر دیا ہے، آپدَامَتْ بَرَکاتُہُمُ الْعَالِیَہکی صحبت سے فائدہ اُٹھاتے  ہوئے کثیر اسلامی بھائی وقتاً فوقتاً مختلف مقامات پر ہونے والے مَدَنی مذاکرات میں مختلف قسم کے موضوعات  مثلاً عقائدو اعمال، فضائل و مناقب ، شریعت و طریقت، تاریخ و سیرت ، سائنس و طِبّ، اخلاقیات و اِسلامی معلومات، روزمرہ معاملات اور دیگر بہت سے موضوعات سے متعلق سُوالات کرتے ہیں اور شیخِ طریقت امیر اہلسنّتدَامَتْ بَرَکاتُہُمُ الْعَالِیَہانہیں حکمت آموز  اور  عشقِ رسول میں ڈوبے ہوئے جوابات سے نوازتے ہیں۔   

امیرِاہلسنّتدَامَتْ بَرَکاتُہُمُ الْعَالِیَہ کے ان عطاکردہ دلچسپ اور علم و حکمت سے لبریز  مَدَنی پھولوں کی خوشبوؤں سے دنیا بھرکے مسلمانوں کو مہکانے کے مقدّس جذبے کے تحت  المدینۃ العلمیہ کا شعبہ ’’ فیضانِ مدنی مذاکرہ‘‘ ان مَدَنی مذاکرات کوکافی ترامیم و اضافوں  کے ساتھ ’’ فیضانِ مدنی مذاکرہ‘‘کے نام سے پیش کرنے کی سعادت حاصل کر رہا ہے۔ان تحریری گلدستوں کا مطالعہ کرنے سے اِنْ شَآءَ اللہ  عَزَّوَجَلَّ  عقائد و اعمال اور ظاہر و باطن کی اصلاح، محبت ِالٰہی و عشقِ رسول  کی لازوال دولت کے ساتھ ساتھ مزید حصولِ علمِ دین کا جذبہ بھی بیدار ہوگا۔

اِس رسالے میں جو بھی خوبیاں ہیں یقیناً  ربِّ رحیم  عَزَّوَجَلَّ  اور اس کے محبوبِ کریم صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ کی عطاؤں ، اولیائے کرامرَحِمَہُمُ اللّٰہ ُ السَّلَام  کی عنایتوں اور امیراہلسنّت دَامَتْ بَرَکاتُہُمُ الْعَالِیَہ کی شفقتوں اور پُرخُلوص دعاؤں کا نتیجہ ہیں اور خامیاں ہوں تو  اس میں ہماری غیر ارادی کوتاہی کا دخل ہے۔

 مجلس المدینتہ العلمیہ

شعبہ فیضانِ مدنی مذاکرہ

۱۵ربیع الآخر ۱۴۳۶ھ/05فروری 2015 ء

   

اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ رَبِّ الْعٰلَمِیْنَ وَ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلَامُ عَلٰی سَیِّدِ الْمُرْسَلِیْنَ ط

اَمَّا بَعْدُ فَاَعُوْذُ بِاللّٰہِ مِنَ الشَّیْطٰنِ الرَّجِیْمِ ط  بِسْمِ اللہِ الرَّحْمٰنِ الرَّ حِیْم ط

                                                 ولی اللہ کی پہچان

شیطان لاکھ سُستی دِلائے یہ رسالہ(۳۶صفحات) مکمل پڑھ لیجیے  اِنْ شَآءَ اللّٰہ   عَزَّوَجَلَّ  معلومات کا اَنمول خزانہ ہاتھ آئے گا۔

دُرُود شریف کی فضیلت

شہنشاہِ خوش خصال، پیکرِ حُسن وجمال، دافِعِ رنج و مَلال، صاحب ِجُودو نوال، رسولِ بے مثال، بی بی آمِنہ کے لال، محبوبِ ربّ ذُوالجلال صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ    کا فرمانِ عالیشان ہے :  جس نے مجھ پر دن میں ایک ہزار مرتبہ دُرُودِ پاک پڑھا، وہ مرے گا نہیں جب تک جنّت میں اپنا ٹھکانہ نہ دیکھ لے۔([1])

صَلُّوا  عَلَی الْحَبیب!                                               صَلَّی اللّٰہُ  تَعَالٰی عَلٰی مُحَمَّد

وِلایت کسے کہتے ہیں ؟

عرض :  وِلایت کسے کہتے ہیں ؟نیز کیا عبادت و ریاضت سے وِلایت  حاصل کی جا  سکتی  ہے؟

ارشا د  :  دعوتِ اسلامی کے اِشاعتی ادارے مکتبۃ المدینہ کی مطبوعہ1360صَفحات پر مشتمل کتاب بہارِشریعت(جلد اوّل)صَفْحَہ264پر ہے :  وِلایت ایک قُربِ خاص ہے کہ مولیٰ  عَزَّ وَجَلَّ  اپنے برگزیدہ بندوں کو محض اپنے فضل و کرم سے عطا فرماتا ہے۔وِلایت وَہبی شے ہے( یعنی اللہ عَزَّ وَجَلَّ    کی طرف سے عطا کردہ اِنعام ہے)، نہ یہ کہ اَعمالِ شاقّہ(سخت مشکل اعمال) سے آدمی خود حاصل کرلے، البتہ غالباً اعمالِ حَسَنہ اِس عطیۂ الٰہی کے لیے ذریعہ ہوتے ہیں اور بعضوں کو ابتداءً مل جاتی ہے۔

 



[1]     اَلتَّرْغِیْب وَالتَّرْھِیْب، کتاب الذکر والدعاء، الترغیب فی اِکثار الصلاة...الخ، ۲/۳۲۶، حدیث : ۲۵۹۱



Total Pages: 8

Go To