Book Name:Barakate Namaz aur Tarke Namaz ke Waeiden

فرمانِ مُصْطَفٰے صَلَّی اللہ عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم ہے : جس نے نماز پر مُحَافظَت(یعنی ہمیشگی اختیار) کی ، قِیامت کے دن وہ نماز اُس کے ليے نُور و بُرہان (یعنی دلیل)اور نَجات ہو گی اور جس نے مُحَافظَت(ہمیشگی اختیار) نہ کی اس کے ليے نہ نُور ہے نہ بُرہان (یعنی دلیل)نہ نَجات (ہوگی)اور(ایسا شخص) قِیامت کے دن قارُون و فِرعَون و ہامان و اُبَیْ بن خَلْف کے ساتھ ہوگا۔ (المسند للإمام أحمد بن حنبل ، مسند عبد اﷲ بن عمرو ، الحدیث : ۶۵۸۷ ، ج۲ ، ص۵۷۴)

عُلمائے کِرامرَحِمَہُمُ اللّٰہ ُ السَّلَام نے  اِس حدیثِ پاک کی شَرح کرتے ہوۓ اِرْشادفرمايا ہے کہ “ بے نمازی کا حَشْر ان لوگوں کے ساتھ اِس لئے ہو گا کہ اگر اُسے اُس کے مال نے نَماز سے غافِل رکھا تو وہ قارُون کی طرح ہے ، لہٰذا اُس کے ساتھ اُٹھايا جائے گا اور اگر اُ س کی حُکومت نے اُسے غَفْلت ميں ڈالا تو وہ فرعَون کی طرح ہے لہٰذا اُس کا حَشْر اُس(فرعون) کے ساتھ ہو گا (اوراگر)اُس کی غَفْلت کا سبَب اُس کی وَزارت ہو گی تو وہ ہامان کی طرح ہوا لہٰذا اُس (ہامان)کے ساتھ ہوگا يا پھر اُس کی تجارت اُسے غَفْلت ميں ڈالے گی لہٰذا وہ مکہ کے کافر اُبَیّ بن خَلْف کے مُشابہ ہونے کی وَجہ سے اُس (اُبَیّ بن خَلْف)کے ساتھ اُٹھايا جائے گا۔ (کتاب الکبائر ، الکبیرۃ الرابعۃفی ترک الصلوٰۃ ، ص۲۱)

پیارے اسلامی بھائیو!اس حَدیثِ پاک میں اُن لوگوں کے لیے دَرْسِ عِبْرت ہے جو اپنے کاروبارمیں مَصْرُوف رہتے ہیں اورنمازتَرْک کر دیتے ہیں۔ جب اُنہیں نمَاز کی دعوت دی جاۓ تو  کاروباری مَصْرُوفیت کا بہانہ  بنا دیتے ہیں۔ ایسے لوگوں کو قرآنِ پاک کی اس آیتِ مُبارَکہ پر غور کرنا چاہئے۔ اللہ پاک پارہ28 ، سُورَۃُ الۡمُنَافِقُوۡن کی آیت نمبر 9میں اِرْشادفرماتا ہے :

یٰۤاَیُّهَا الَّذِیْنَ اٰمَنُوْا لَا تُلْهِكُمْ اَمْوَالُكُمْ وَ لَاۤ اَوْلَادُكُمْ عَنْ ذِكْرِ اللّٰهِۚ-وَ مَنْ یَّفْعَلْ ذٰلِكَ فَاُولٰٓىٕكَ هُمُ الْخٰسِرُوْنَ(۹)  (پ28 ، المنافقون : 9)                                                                                                                                                                                                                                                                             

تَرْجَمَۂ کنز الایمان : اے ايمان والوتمہارے مال نہ تمہاری اَوْلاد کوئی چيز تمہيںاللہ کے ذِکْر سے غافِل نہ کرے اور جو ايسا کرے تو وہی لوگ نُقْصان ميں ہيں۔

صَدْرُالْاَفاضِل مُفْتی سَیِّد نَعیمُ الدِّین مُرادآبادی رَحْمَۃُ اللّٰہ  عَلَیْہ  اِس آیت کے تحت اپنی تفسیر خزائنُ