Book Name:Naik Bannay aur Bananay kay Tariqay

اُن کی یادوں میں کھو جائیے            مصطفٰی مصطفٰی کیجئے

          میٹھے میٹھے اسلامی بھائیو!  ذکر اللّٰہ عزَّوَجَلَّ کی عادت بنانے اور ہر گھڑی اپنی زبان کو ذکر اللّٰہ سے تر رکھنے کیلئے تبلیغِ قرآن وسنّت کی عالمگیر غیر سیاسی تحریک ،  دعوتِ اسلامی کے مدنی ما حو ل سے ہر دم وابَستہ رہئے، سنتوں کی تربیت کے لیے عاشقان رسول کے ساتھ سنتوں بھرا سفر کیجئے اور کامیاب زندگی گزارنے اور آخرت سنوارنے کے لیے مدنی انعامات کے مطابق عمل کرکے روزانہ فکرمدینہ کے ذریعے رسالہ پر کیجئے۔

            دعوتِ اسلامی کے اشاعتی ادارے مَکْتَبَۃُ الْمَدِیْنَہ کی مطبوعہ 1548 صَفْحات پر مشتمل کتاب   ’’  فیضانِ سنّت ‘‘  جلد اوّل،صَفْحَہ 1133 پر شیخِ طریقت، امیر اہلِسنت، حضرت علامہ مولانا ابو بلال محمد الیاس عطار قادری رضوی دَامَتْ بَرَکَاتُہُمُ العَالِیَہ فرماتے ہیں :اَلْحَمْدُ لِلّٰہ سنّتوں بھری زندگی گزارنے کیلئے عبادات و اخلاقیات کے تعلُّق سے اسلامی بھائیوں کے لئے 72، اسلامی بہنوں کیلئے 63 اور طَلَبۂ علمِ دین کیلئے 92، دینی طالِبات کیلئے 83 اور مدنی مُنّوں اور مُنّیوں کیلئے40 مدنی اِنعامات سُوالات کی صورت میں مُرتَّب کئے گئے ہیں ۔ فکرِ مدینہ ( یعنی اپنے اعمال کا محاسبہ ) کرتے ہوئے روزانہ مدنی انعامات کا رسالہ پُر کر کے دعوتِ اسلامی کے مقامی ذمّہ دار کو ہر مدنی ماہ یعنی اسلامی مہینے کی 10تاریخ کے اندراندرجمع کروانا ہوتا ہے۔ مدنی انعامات نے نہ جانے کتنے اسلامی بھائیوں اور اسلامی بہنوں کی زندگیوں میں مدنی انقِلاب برپا کردیا ہے!  اِس کی ایک جھلک مُلا حَظہ ہو چُنانچِہ

             نیوکراچی کے ایک اسلامی بھائی کا کچھ اس طرح کا بیان ہے: عَلاقے کی مسجِد کے امام صاحِب جو کہ دعوتِ اسلامی سے وابَستہ ہیں ، انہوں نے اِنفرادی کوشِش کرتے ہوئے میرے بڑے بھائی جان کو مدنی انعامات کا ایک رسالہ تحفے میں دیا۔ وہ گھر لے آئے اور پڑھا تو حیران رَہ گئے کہ اِس مختصر سے رسالہ میں ایک مسلمان کو اسلامی زندگی گزارنے کا اتنا زبردست فارمولا دے دیا گیا ہے!  مدنی انعامات کا رسالہ ملنے کی بَرَکت سے اَلْحَمْدُ لِلّٰہ اُن کو نَماز کا جذبہ ملا اور نَمازِ با جماعت کی ادائیگی کے لئے مسجِد میں حاضِر ہو گئے اور اب پانچ وَقت کے نَمازی بن چکے ہیں ،  داڑھی مبارَک بھی سجا لی اور مدنی انعامات کا رسالہ بھی پُرکرتے ہیں ۔

صَلُّوْا عَلَی الْحَبِیْب               صَلَّی اللّٰہُ  تَعَالٰی عَلٰی مُحَمَّد

          میٹھے میٹھے اسلامی بھائیو!  بیان کو اِختِتام کی طرف لاتے ہوئے سنّت کی فضیلت اور چند سنّتیں اور آداب بیان کرنے کی سعادت حاصِل کرتا ہوں ۔ تاجدارِ رسالت، شَہَنْشاہِ نُبُوَّت، مصطفی جانِ رحمت، شمعِ بزمِ ہدایت ، نوشۂ بزمِ جنّت صَلَّی  اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ  کا فرمانِ جنّت نشان ہے: جس نے میری سنّت سے مَحَبَّتکی اُس نے مجھ سے مَحَبَّت کی اور جس نے مجھ سیمَحَبَّت کی وہ جنّت میں میرے ساتھ ہو گا۔( تاریخ مدینۃ دمشق لابن عساکر، انس بن مالک ،  ج۹ ،  ص۳۴۳ )

            لہٰذا سرمہ لگانے کے4 مدنی پھول قبول فرمائیے،(اس کتاب کے صفحہ نمبر سے583بیان کیجئے)

٭٭٭٭٭

بیان نمبر6:

فیضانِ صلٰوۃ وسلام

           شیخ ِطریقت، امیر ِاہل ِسنت، بانی ٔدعوتِ اسلامی حضرت علامہ مولانا ابو بلال  محمد الیاس عطار قادری رضوی دَامَتْ بَرَکَاتُہُمُ الْعَالِیَہ اپنے رسالہ  ’’  باحیا نوجوان ‘‘  میں درود شریف کے متعلق حدیثِ پاک بیان فرماتے ہیں کہ حضرتِ  سیِّدنا ابو دَرداء    رَضِیَ  اللہ  تَعَالٰی عَنْہُ سے روایت ہے : میٹھے میٹھے مصطفی صَلَّی  اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ  نے ارشاد فرمایا: ’’  جو شَخص صبح وشام مجھ پر دس دس بار درُود شریف پڑھے گا بروزِ قیامت میری شَفاعت اسے پہنچ کر رہے گی۔ ‘‘ (الترغیب والترہیب،کتاب النوافل، باب الترغیب فی آیات۔۔۔الخ، الحدیث:۹۹۱،ج۱،ص۳۱۲)

صَلُّوْا عَلَی الْحَبِیْب                   صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلٰی مُحَمَّد

با کمال مدنی منّی

            حضرت سیدنا شیخ محمد بن سُلَیمان جَز ُولی رَحْمَۃُ  اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ فرماتے ہیں : میں سفر پر تھا ایک مقام پر نماز کا وقت ہوگیا، وہاں کنواں تو تھا مگر ڈول اور رسّی نَدارَد (یعنی غائب) میں اِسی فکر میں تھا کہ ایک مکان کے اوپر سے ایک مدنی منی نے جھانکا اور پوچھا: آپ کیا تلاش کر رہے ہیں ؟  میں نے کہا: بیٹی !  رسی اور ڈول۔ اس نے پوچھا : آپ کا نام؟  فرمایا: محمد بن سلیمان جَز ولی ،  مدنی منی نے حیرت سے کہا : اچھا آپ ہی ہیں جن کی شہرت کے ڈنکے بج رہے ہیں اور حال یہ ہے کہ کنویں سے  پانی بھی نہیں نکال سکتے !  یہ کہہ کر اس نے کنویں میں تھوک دیا آناً فاناً پانی اوپر آگیا اور کنویں سے چھلکنے لگا ،  آپ رَحْمَۃُ  اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ نے وضو سے فراغت کے بعد اس باکمال مدنی منی سے فرمایا : بیٹی !  سچ بتاؤ تم نے یہ کمال کس طرح حاصل کیا؟  کہنے لگی : میں درودِ پاک پڑھتی ہوں ،  اِسی کی برکت سے یہ کرم ہوا ہے۔ آپ رَحْمَۃُ اللّٰہِ تَعَالٰی عَلَیْہِفرماتے ہیں : اُس باکمال مدنی منی سے مُتَاثِّر ہو کر میں نے وہیں عہد کیا کہ میں درود شریف کے متعلق کتاب لکھوں گا۔(سعادۃ الدارین،الباب الرابع  فیماورد من لطائف المرائی۔۔۔الخ،اللطیفۃ الخامسۃ عشرۃ بعد المائۃ،ص۱۵۸)

چنانچہ آپ رَحْمَۃُ  اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ نے دُرود شریف کے بارے میں کتاب لکھی جو بے حد مقبول ہوئی اور اس کتاب کا نام  ’’  دَلَائِلُ الْخَیْرَات ‘‘  ہے ۔

            میٹھے میٹھے اسلامی بھائیو !  حصولِ برکت ،  ترقی ٔ مَعْرِفَت اور میٹھے میٹھے آقا صَلَّی  اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ  کی قربت کیلئے دُرود و سلام بہترین ذَرِیعہ ہے ،  شب و روز ہمیں اپنے محسن آقا صَلَّی  اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ  پر دُرُود و سلام کے پھول نچھاور کرتے رہنا چاہئے ،  اس میں کوتاہی نہیں کرنی چاہئے ،  درود شریف کے فضائل میں بے شمار کتب تصنیف کی جا چکی ہیں اس کے فضائل و ثمرات اکثر مبلّغینبیان کرتے ہی رہتے ہیں ،  قلم کی روشنائی تو ختم ہو سکتی ہے ،  بیان کے الفاظ بھی ختم ہو سکتے ہیں مگر فضائلِ دُرُود و سلام بَرخَیْرُ الْاَنَام کا احاطہ نہیں ہو سکتا لہٰذا



Total Pages: 194

Go To