Book Name:Naik Bannay aur Bananay kay Tariqay

5 : ہفتہ وار اجتماع میں پابندی وقت کے ساتھ اول تا آخر شرکت کے لیے تیار کرناہے۔

6  : مسجد کے امام صاحب اور کمیٹی والوں کو بھی مدنی قافلے میں سفر پر آمادہ کرناہے۔

 7  : مسجد سطح پر صدائے مدینہ کی ترکیب بھی بنانی ہے۔

 8  : مسجد سطح پر ہر روز ملاقات کے لئے فجر کے بعد مدنی حلقے شروع کرنا ہے اور مسجد کے اطراف میں جو لوگ نماز نہیں پڑھتے انہیں نماز کی ترغیب بھی دلانی ہے۔

 9  : مسجد کے قرب و جوار میں پرانے اسلامی بھائیوں میں سے جو پہلے آتے تھے اب نہیں آتے ان سے ملاقات کرکے انہیں مدنی قافلوں میں سفر کی ترغیب دلانی ہے۔

 10 : شرکائے درس کو ’’  دعوت اسلامی ‘‘  کا مبلّغ و معلّم بنانا ہے۔

11  :مسجد کے قریب چوک درس کی ترکیب بنانی ہے۔

12 : مسجدمیں مدرسۃ المدینہ بالغان کاسلسلہ شروع کرنا اوراسے مضبوط کرناہے۔

٭٭٭٭٭٭

فیضانِ سنّت سے دَرْس دینے کا طریقہ

                تین بارا س طرح اعلان فرمایئے:قریب قریب تشریف لائیے ۔ پردے میں پردہ کئے دو زانو بیٹھ کر اس طرح ا  بتِدا ء کیجئے :

اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ رَبِّ الْعٰلَمِیْنَ وَ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلَامُ علٰی سَیِّدِ الْمُرْسَلِیْنَ ط

اَمَّا بَعْدُ فَاَعُوْذُ بِاللّٰہِ مِنَ الشَّیْطٰنِ الرَّجِیْمِ ط  بِسْمِ  اللہ  الرَّحْمٰنِ الرَّ حِیْم ط

    اس کے بعد اِس طرح دُرودو سلام پڑھایئے:

اَلصَّلٰوۃُ وَالسَّلامُ عَلَیْکَ  یَا رَسُوْلَ اللّٰہ        وَعَلٰی الکَ وَاَصْحٰبِکَ یَا حَبِیْبَ اللّٰہ

اَلصَّلٰوۃُ وَالسَّلا مُ  عَلَیْکَ  یَا  نَبِیَّ  اللّٰہ                                                               وَعلٰی ٰاٰلِکَ وَ اَصْحٰبِکَ یَا نُوْرَاللّٰہ

 اگر مسجِد میں ہیں تو اسطرح اعتکا ف کی نیّت کروایئے۔

            نَوَیْتُ سُنَّۃَ الاعْتِکَاف   (ترجَمہ: میں نے سنّتِ اعتکاف کی نیت کی ) پھر اسطرح کہئے !  میٹھے میٹھے اسلامی بھائیو! قریب قریب آ کر درس کی تَعظِیم کی نیّت سے ہو سکے تو دوزانو بیٹھ جائیے اگر تھک جائیں تو جس طرح آپ کو آسانی ہو اُسی طرح بیٹھ کر نگاہیں نیچی کیے توجُّہ کے ساتھ رِضائے الٰہی کیلئے علمِ دین حاصل کرنے کی نیّت سے فیضانِ سُنَّت کا دَرس سنئے کہ لاپرواہی کیساتھ اِدھر اُدھر دیکھتے ہوئے، زمین پر اُنگلی سے کھیلتے ہوئے ، لباس بدن یا بالوں وغیرہ کوسَہْلاتے ہوئے سُننے سے اسکی بَرَکتیں زائل ہونے کا اندیشہ ہے۔(بیان کے آغازمیں بھی اِسی انداز میں رغبت دِلایئے اور اچّھی اچّھی نیّتیں بھی کروائیے)یہ کہنے کے بعدفیضانِ سنَّت سے دیکھ کرایک دُرُود شریف کی فضیلت بیان کیجئے ۔ پھر کہئے:

صَلُّوا عَلَی الْحَبِیب !                                                                                                صلَّی اللّٰہُ تعالٰی علٰی محمَّد

           جو کچھ لکھا ہوا ہے وُہی پڑھ کر سنایئے۔آیات و عَرَبی عبارات کا صِرْف ترجَمہ پڑھئے۔ کسی بھی آیت یا حدیث کا اپنی رائے سے ہر گزخُلاصہ مت کیجئے۔

دَرْس  کے آخِرمیں اِس طرح ترغیب دلائیے

                  (ہر مُبلّغ کو چاہیے کہ زَبانی یاد کر لے اور درس و بیان کے آخر میں بِلا کمی  بیشی اِسی طرح ترغیب دلایا کرے)

                           اَلْحَمْدُ  للّٰہعَزَّوَجَلَّتبلیغ قراٰن و سنّت کی عالمگیر غیر سیاسی تحریک دعوتِ اسلامی کے مہکے مہکے مدنی ماحول میں بکثرت سنتیں سیکھی اور سکھائی جاتی ہیں ۔ ہر جُمعرات مغرِب کی نَماز کے بعدآپ کے شہر میں ہونے والے دعوتِ اسلامی کے ہفتہ وارسنّتوں بھرے اجتِماع میں رِضائے الٰہی کیلئے اچّھی اچّھی نیّتوں کے ساتھ ساری رات گزارنے کی مدنی التجاء ہے۔ عاشِقانِ رسول کے  مدنی قافِلوں میں بہ نیت ثواب سنتوں کی تربیّت کیلئے سفر اور روزانہ فکرِ مدینہ کے ذَرِیْعے مَدَ نی اِنعامات کا رسالہ پُر کر کے ہرمدنی ماہ کے ابتِدائی دس دن کے اندر اندر اپنے یہاں کے ذ مّہ دار کو جَمع کروانے کا معمول بنا لیجئے ۔اِنْ شَآءَ اللہ  عَزَّ وَجَلَّ  اِس کی بَرَکت سے پابندِ سنّت بننے ،  گناہوں سے نفرت کرنے اور ایمان کی حفاظتکیلئے کُڑھنے کا ذِہن بنے گا۔ ہر اسلامی بھائی اپنا یہ ذِہن بنا ئے کہمجھے اپنی اور ساری دنیا کے لوگوں کی اِصلاح کی کوشِش کرنی ہے۔اِنْ شَآءَ اللہ  عَزَّ وَجَلَّ اپنی اِصلا ح کی کوشِش کیلئے مدنی اِنعامات پر عمل اور ساری دنیا کے لوگوں کی اِصلاح کی کوشِش کیلئے ([1]مدنی قافِلوں میں سفر کرنا ہے۔اِنْ شَآءَ اللہ  عَزَّ وَجَلَّ                               

اللّٰہکرم ایسا کرے تجھ پہ جہاں میں

اے دعوتِ اسلامی تری دھوم مچی ہو

            آخِر میں خشوع وخُضُوع (یعنی جسم ودل کی عاجِزی)اور قبولیت کے یقین کے ساتھ دُعا میں ہاتھ اُٹھانے کے آداب بجالاتے ہوئے بلا کمی بیشی اس طرح دعا مانگئے:

اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ رَبِّ الْعٰلَمِیْنَ وَ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلَامُ علٰی سَیِّدِ الْمُرْسَلِیْنَ ط

 



[1]    یہاں اسلامی بہن کہے: ’’گھر کے مردوں کو مَدَنی قافلوں میں سفر کروانا ہے۔



Total Pages: 194

Go To