Book Name:Naik Bannay aur Bananay kay Tariqay

مدنی قافلوں میں سفر کرنے والے عاشقانِ رسول کے لیے مدنی گلدستہ

 

 

 

 

 

 

نیک بننے اور بنانے کے طریقے

 

 

 

 

 

پیش کش

مجلس مدنی قافلہ و

مجلس المد   ینۃ العلمیۃ(دعوتِ اسلامی )

 

 

ناشر

 

مکتبۃ المدینہ باب المدینہ کراچی

 

اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ رَبِّ الْعٰلَمِیْنَ وَ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلَامُ عَلٰی سَیِّدِ الْمُرْسَلِیْنَ ط

اَمَّا بَعْدُ فَاَعُوْذُ بِاللّٰہِ مِنَ الشَّیْطٰنِ الرَّجِیْمِ ط  بِسْمِ  اللہ  الرَّحْمٰنِ الرَّ حِیْم ط

 ’’ نیک بننے اور بنانے کے طریقے ‘‘  کے بائیس ۲۲ حروف کی نسبت سے اس کتاب کو پڑھنے کی  22  نیّتیں

            فرمانِ مصطفی صَلَّی  اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ :  ’’  نِیَّۃُ الْمُؤْمِنِ خَیْرٌ مِنْ عَمَلِہٖ ‘‘  یعنی مسلمان کی نیّت اس کے عمل سے بہترہے۔   (المعجم الکبیر للطبرانی  ج۶ ص۱۸۵ حدیث۵۹۴۲)

دو مدنی پھول:      {1}  بغیر اچھی نیت کے کسی بھی عملِ خیر کا ثواب نہیں ملتا۔ 

                         {2} جتنی اچھی نیتیں زیادہ، اتنا ثواب بھی زیادہ۔

 {1} ہر بار حَمد و  {2}  صلوٰۃ اور  {3}  تَعَوُّذ و {4}  تَسمِیہ سے آغاز کروں گا (اسی صَفْحہ پر اُوپر دی ہوئی دو عَرَبی عبارات پڑھ لینے سے چاروں نیّتوں پر عمل ہوجائے گا)  {5}  رِضائے الٰہی عزَّوَجَلَّ کیلئے اس کتاب کا اوّل تا آخِر مطالَعہ کروں گا  {6} حتَّی الوَسْع اِس کا با  وُضُو اور  {7}  قبلہ رو مطالَعہ کروں گا {8} شرعی مسائل سیکھوں گا  {9} اگر کوئی بات سمجھ نہ آئی تو علَماء سے پوچھ لوں گا {10} کتاب مکمَّل  پڑھنے کے لئے بہ نیتِ حصولِ علمِ دین روزانہ چند صَفْحات پڑھ کر علمِ دین حاصل کرنے کے ثواب کا حقدار بنوں گا {11} اس کتاب کے مطالَعَہ کا ثواب ساری اُمّت کو ایصال کروں گا {12} قرآنی آیات اور {13} احادیثِ مبارکہ کی زیارت کروں گا  {14}  جہاں جہاں  ’’ اللّٰہ  ‘‘  کا نام پاک آئے گا وہاں  ’’ عزَّوَجَلَّ  ‘‘  اور  {15} جہاں جہاں  ’’ سرکار ‘‘  کا اسمِ مبارک آئے گا وہاں  ’’ صَلَّی  اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ  ‘‘  پڑھوں گا {16} (اپنے ذاتی نسخے پر)عِنْدَ الضَّرورت خاص خاص مقامات پر انڈر لائن کروں گا {17}  دوسروں کو یہ کتاب پڑھنے کی ترغیب دلاؤ ں گا {18} اس کتاب میں دئیے گئے جدول کے مطابق مدنی قافلوں میں سفر کروں گا {19} اس حدیث ِپاک  ’’  تَھَادَوْا تَحَابُّوْا ‘‘  یعنی ایک دوسرے کو تحفہ دو آپس میں محبت بڑھے گی۔(مؤطا امام مالک  ج۲ ص۴۰۷ حدیث ۱۷۳۱) پر عمل کی نیت سے (ایک یا حسبِ توفیق تعداد میں ) یہ کتابیں خرید کر دوسرں کو      تحفۃً دوں گا {20}  جن کو دُوں گا حتَّی الْاِمکان انہیں یہ ہدف بھی دوں گا کہ آپ اتنے دن (مثلاً 25)دن کے اندر اندر مکمل پڑھ لیجئے {21} اس کتاب کے ذریعے عاشقانِ رسول کی تربیت کی کوشش کروں گا  {22}  کتابت وغیرہ میں شَرْعی غلَطی ملی تو ناشِرین کوتحریری طور پر مُطَّلع کروں گا (ناشرین ومصنّف وغیرہ کو کتابوں کی اغلاط صِرْف زَبانی بتانا خاص مفید نہیں ہوتا)

کامل مسلمان کی تعریف

سرکارِ مدینۂ منوّرہ، سردارِ مکّۂ مکرّمہ صَلَّی  اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ  کا فرمانِ عظمت نشان ہے: ’’  اَلْمُسْلِمُ مَنْ سَلِمَ الْمُسْلِمُوْنَ مِنْ لِّسَانِہٖ وَیَدِہٖ ‘‘  یعنی مسلمان وہ ہے کہ اس کے ہاتھ اور زَبان سے دوسرے مسلمان محفوظ رہیں ۔ (غیبت کی تباہ کاریاں ، ص۵۹ بحوالہ صحیح البخاری،کتاب الایمان،باب المسلم من سلم۔۔۔الخ،الحدیث:۱۰،ج۱،ص۱۵)

اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ رَبِّ الْعٰلَمِیْنَ وَ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلَامُ عَلٰی سَیِّدِ الْمُرْسَلِیْنَ ط

 



Total Pages: 194

Go To