Book Name:Sood aur us ka Ilaj

یہ رسالہ سود ، اس کی نحوستوں اوراس سے بچنے کے طریقوں پر مشتمل ہے۔

 

 

سود اور اس کا علاج

 

 

پیش کش

مرکزی مجلس شوریٰ (دعوتِ اسلامی )


ناشر
مکتبۃ المد ینہ باب المدینہ کراچی

بِسْمِ اللہِ الرَّحْمٰنِ الرَّ حِیْم ط

اَلصَّلٰوۃُ وَالسَّلامُ عَلَیْکَ یَارَسُوْلَ اللہِ

نام بیان : سود اور اس کا علاج

پیش کش : مرکزی مجلس شُوریٰ(دعوتِ اسلامی )

سن طباعت : شعبان المعظم ١٤۳۱ ھ بمطابق جولائی 2010

ناشر :  مَکْتَبَۃُ الْمَدِینہ باب المدینہ (کراچی)

 

مکتبۃ المدینہ کی مختلف شاخیں

مکتبۃ المدینہ شہید مسجد کھارا در باب المدینہ کراچی

مکتبۃ المدینہ دربار مارکیٹ گنج بخش روڈ مرکزالاولیاء لاہور

مکتبۃ المدینہ اصغر مال روڈ نزد عید گاہ ، راولپنڈی

مکتبۃ المدینہ امین پور بازار ، سردار آباد (فیصل آباد)

مکتبۃ المدینہ نزد پیپل والی مسجد اندرون بوہڑ گیٹ مدینۃ الاولیاء ملتان

مکتبۃ المدینہ چھوٹکی گھٹّی ، حیدر آباد

مکتبۃ المدینہ چوک شہیداں میر پور (کشمیر)

E.mail.maktaba@dawateislami.net

www.dawateislami.net

Ph : 4921389-93

مدنی التجا : کسی اور کو یہ رسالہ چھاپنے کی اجازت نہیں ہے ۔

اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ رَبِّ الْعٰلَمِیْنَ وَ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلَامُ عَلٰی سَیِّدِ الْمُرْسَلِیْنَ ط

اَمَّا بَعْدُ فَاَعُوْذُ بِاللّٰہِ مِنَ الشَّیْطٰنِ الرَّجِیْمِ ط  بِسْمِ اللہِ الرَّحْمٰنِ الرَّ حِیْم ط

”سود اور اس کا علاج“کے14حُروف کی نسبت سے اس رسالے کو پڑھنے کی ”14 نیّتیں

فرمانِ مصطفےٰصَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَآلِہٖ وَسَلَّمَ : نِیَّۃُ الْمُؤْمِنِ خَیْرٌ مِّنْ عَمَلِہٖ۔مسلمان کی نیّت اس کے عمل سے بہتر ہے۔   (المعجم الکبیر  ،  الحدیث :  5942 ،  ج6 ،  ص185)

دو مَدَنی پھول :

  (1)  بِغیر اچّھی نیّت کے کسی بھی عملِ خیر کا ثواب نہیں ملتا۔

  (2)   جتنی اچّھی نیّتیں زِیادہ ، اُتنا ثواب بھی زِیادہ۔

(1)ہر بارحَمد و (2)صلوٰۃ اور(3)تعوُّذو(4)تَسمِیہ سے آغاز کروں گا۔ (اسی صفحہ پر اُوپر دی ہوئی دو عَرَبی عبارات پڑھ لینے سے چاروں نیّتوں پر عمل ہوجائے گا)(5) رضائے الہٰی کیلئے اس رسالے کا اول تا آخر مطالعہ کروں گا۔ (6)حتَّی الوَسْعْ اِس کا باوُضُو اور (7)قِبلہ رُو مطالَعَہ کروں گا (8)قرآنی آیات اور (9)احادیثِ مبارکہ کی زیارت کروں گا (10)جہاں جہاں “اللّٰہ “ کا نامِ پاک آئے گا وہاں عَزَّوَجَلَّاورجہاں جہاں “ سرکار “ کا اِسْم مبارَک آئے گا وہاں صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَآلِہٖ وَسَلَّمپڑھوں گا۔ (11)دوسروں کویہ رسالہ پڑھنے کی ترغیب دلاؤں گا۔ (12)اس حدیثِ پاک “ تَہَادَوۡا تَحَابُّوۡا “ ایک دوسرے کو تحفہ دو آپس میں محبت بڑھے گی۔ (مؤطا امام مالک ،  الحدیث : 1731 ،  ج2 ،  ص407) پر عمل کی نیت سے (ایک یا حسبِ توفیق)یہ رسالہ خرید کر دوسروں کو تحفۃً دوں گا۔ (13)اس رسالے کا مطالعہ کر کے خود بھی سود سے بچوں گا اور دوسروں کو بھی اس لعنت سے بچانے کی کوشش کروں گا۔ (14)کتابت وغیرہ میں شرعی



Total Pages: 23

Go To