Book Name:Aarzoo e Deedar e Madina

قبر میں مجھ کو تنہا لِٹا کر                چلدیئے ہائے سارے بَرادَر

دل اندھیرے میں گھبرا رہا ہے          یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

مَغفِرت کا ہوں تجھ سے سُوالی         پھیرنا اپنے در سے نہ خالی

مجھ گنہگار کی اِلتجا ہے                   یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

میرے مُرشِد جو غوثُ الوَرا ہیں          شاہ احمد رضا رہنُما ہیں

یہ تِرا لُطف تیری عطا ہے              یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

نارِ دوزخ سے مجھ کو اَماں دے          بَہر حَسنَین باغِ جِناں دے

کر دے رَحمت مِری اِلتجا ہے           یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

واسِطہ تجھ کو پیارے نبی کا             اور اَصحاب و اٰلِ نبی کا

بخش دے مجھ کو یہ اِلتجا ہے             یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

یاخدا ماہِ رمضاں کے صدقے           سچّی توبہ کی توفیق دیدے

نیک بن جاؤں جی چاہتا ہے             یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

دَردِ عِصیاں مِٹا یاالہٰی                 دیدے کامِل شِفا یاالہٰی

تجھ سے بیمار کی اِلتجا ہے                یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

جو ہیں بیمار صحّت کے طالِب           ان پہ فرما کرم ربِّ غالِب

تجھ سے رحم و کرم کی دُعا ہے           یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

میں نے مانا کہ سب سے بُرا ہوں            کس کاہوں ؟تیراہوں میں تراہوں

ناز رحمت پہ مجھ کو بڑا ہے              یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

عیب دُنیا میں تو نے چھپائے            حَشر میں بھی نہ اب آنچ آئے

آہ! نامہ مِرا کھل رہا ہے                یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

عمر بدیوں میں ساری گزاری          ہائے ! پھر بھی نہیں شَرمساری

بخش محبوب کا واسِطہ ہے        یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

وِردِ لب کلمۂ طَیِّبَہ ہو                 اور ایمان پر خاتِمہ ہو

آگیا ہائے ! وقتِ قضا ہے              یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

یاخدا ایسے اَسباب پاؤں         کاش مکے مدینے میں جاؤں

مجھ کو اَرمان حج کا بڑا ہے        یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

آہ! رنج و اَلَم نے ہے مارا       یاالہٰی مجھے دے سہارا

ایک غمگین دل کی صدا ہے            یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

میری جان آفتوں سے چھڑانا          مُوذی اَمراض سے بھی بچانا

تجھ کو صِدّیق کا واسِطہ ہے              یاخدا تجھ سے میری دُعا ہے

 



Total Pages: 10

Go To