Book Name:Wasail e Bakhshish

حاجی کیلئے دُعاؤں   اور نصیحتوں   کا گُلدستہ ([1])

(غلا م زادہ حاجی بلال رضا ابنِ عطّار  سلمہ الغفار کے سفرِ حج مبارَک کے پُرمَسرَّت موقع پر پندو نصائح پر مبنی گلدستہ)

حج کا پائے گا شَرَف میرا بلال اُمّید ہے

گُنبدِ خَضرا کی دید اس کی بِلا شک عید ہے

مرحبا تم کو مبارَک ہو مدینے کاسفر

فَضلِ رب سے تم پہ نازِل رَحمتیں   ہوں   ہر ڈَگر([2])

یاخُدا! آسان ہو اِس کیلئے حج کا سفر

ذَوق بڑھتا ہی رہے اِس کا خدائے بحر و بَر

رونے والی آنکھ دے اور چاک سینہ کر عطا

یارب! اِس کو الفتِ شاہِ مدینہ کرعطا

ذرّے ذرّے  کا  ادب  اللّٰہ  اس  کو  ہو  نصیب

سیِّدی احمدرضا کا واسطہ ربِّ مُجیب!

 

امتِحاں   درپیش ہو راہِ مدینہ میں   اگر

صَبر کر تُو صَبر کر ہاں   صَبر کر بس صَبر کر

کوئی دُھتکارے یا جھاڑے بلکہ مارے صَبر کر

 مت جھگڑ ، مت بُڑبُڑا ، پا اَجْر رب سے صبر کر

راہِ جاناں   کا ہراِک کانٹا بھی گویا پھول ہے

جوکوئی شِکوہ کرے اُس کی یقینا بُھول ہے

تم زَباں   کا آنکھ کا ’’قُفلِ مدینہ‘‘ لو لگا

ورنہ بڑھ سکتا ہے عِصیاں   کا وہاں   بھی سِلسلہ

گفتگو صادِر نہ کچھ بے کار ہو اِحرام میں 

لب پہ بس لبّیک کی تکرار ہو اِحرام میں 

 



[1]     واضح رہے کہ سابقہ صفحات میں   یہ کلام کچھ تغیّر کے ساتھ مُعتَمِر کے لیے کہا گیا ہے اُمّید ہے کہ ضروری تفریق کے ساتھ دونوں   کلام علیٰحدہ علیٰحدہ ہونے میں   قارئین کو سہولت رہے گی۔

[2]     راستہ ۔



Total Pages: 406

Go To