Book Name:Wasail e Bakhshish

نعمتِ اَخلاق کر دیجے عطا                       یہ کرم یامصطَفیٰ فرمائیے

غیبت و چغلی کی آفت سے بچیں                یہ کرم یامصطَفیٰ فرمائیے

ہم ریاکاری سے بچتے ہی رہیں                    یہ کرم یامصطَفیٰ فرمائیے

نفس و شیطاں   کی شرارت دور ہو             یہ کرم یامصطَفیٰ فرمائیے

دم لبوں   پر آگیا عطاّرؔ کا

اب قدم رَنجہ شہا! فرمائیے

 

جشنِ ولادت کے نعرے

سرکار کی آمد مرحبا              رسول کی آمد مرحبا

سردار کی آمد مرحبا             اچھّے کی آمد مرحبا

سالار کی آمد مرحبا               سچّے کی آمد مرحبا

مختار کی آمد مرحبا                بشیر کی آمد مرحبا

غمخوار کی آمد مرحبا              نذیر کی آمد مرحبا

تاجدار کی آمد مرحبا            مُنیر کی آمد مرحبا

شاندار کی آمد مرحبا            بَصیر کی آمد مرحبا

شہریار کی آمد مرحبا              شَہیر کی آمد مرحبا

شہِ ابرار کی آمد مرحبا           خبیر کی آمد مرحبا

منبع انوار کی آمد مرحبا         ظہِیر کی آمد مرحبا

حُضُور کی آمد مرحبا              رؤف کی آمد مرحبا

پُرنور کی آمد مرحبا               رحیم کی آمد مرحبا

غَیُور کی آمد مرحبا                کریم کی آمد مرحبا

اُس نور کی آمد مرحبا            نعیم کی آمد مرحبا

 

مقبول کی آمد مرحبا                    علیم کی آمد مرحبا

آمِنہ کے پھول کی آمد مرحبا               حلیم کی آمد مرحبا

یاسین کی آمد مرحبا                    حکیم کی آمد مرحبا

طٰہٰ کی آمد مرحبا                         عظیم کی آمد مرحبا

 



Total Pages: 406

Go To