Book Name:Wasail e Bakhshish

پھر مدینے کی اجازت مل گئی

میرے مَدنی پیر و مُرشِد کے طُفیل

پھر مدینے کی اجازت مل گئی

کیوں   نہ جھوموں   کیوں   نہ لوٹوں   مجھ کو تو

پھر مدینے کی اجازت مل گئی

میں   خوشی سے مر نہ جاؤں   اب کہیں 

پھر مدینے کی اجازت مل گئی

دیدے یارب! مجھ کو توفیقِ ادب

پھر مدینے کی اجازت مل گئی

 

رونے والی آنکھ دیدے یاخدا!

پھر مدینے کی اجازت مل گئی

یاالٰہی قلبِ مُضطَر ہو عطا

پھر مدینے کی اجازت مل گئی

اب تو دیدے یاخدا ذَوقِ جُنوں 

پھر مدینے کی اجازت مل گئی

یاخدا دیدے تڑپنے کی ادا

پھر مدینے کی اجازت مل گئی

آتَشِ شوق اور کر دے تیز تر

پھر مدینے کی اجازت مل گئی

ہو عطا سوزِ بِلال اے ذُوالجلال

پھر مدینے کی اجازت مل گئی

ان کے جلوے دیکھ لے وہ آنکھ دے

پھر مدینے کی اجازت مل گئی

 



Total Pages: 406

Go To