Book Name:Wasail e Bakhshish

نہ لندن کی نہ پیرس کی نہ امریکا کی ہے خواہِش

مدینہ ہی ہماری تو ہے منزِل  یارسولَ اللّٰہ

شَفاعت حشر میں   فرماؤگے جب خوش نصیبوں   کی

مجھے کر لینا آقا اُن میں   شامل  یارسولَ اللّٰہ

 

کرم کردو بجز عِصیاں   نہیں   ہے کچھ بھی نامے میں 

عبادت ہے نہ پلّے ہیں   نوافِل  یارسولَ اللّٰہ

ہمارے زَخم ہائے غم رسولِ پاک بھرجائیں 

جگر ہو تیرے غم میں   کاش! گھائل یارسولَ اللّٰہ

کچھ ایسی آگ الفت کی لگا دو میرے سینے میں 

میں   تڑپوں   خوب تڑپوں   مثلِ بِسمِل یارسولَ اللّٰہ

تِرے  اَخلاق پر قرباں   ترے اَوصاف پر واری

مسلماں   کیا عَدو بھی تیرا قائل  یارسولَ اللّٰہ

شہا! جب خُلد میں   آپ آگے آگے جائیں  اس دم کاش

میں   بھی ہو جاؤں   پیچھے پیچھے داخِل یارسولَ اللّٰہ

ابھی بن جائے بگڑی تیرے اِک ادنیٰ اشارے سے

تِرے  عطارؔ  کے  حَل  ہوں    مسائل  یارسولَ اللّٰہ

 

غمِ فُرقت رُلائے کاش ہر دم یارسو لَ اللّٰہ

غمِ فُرقت رُلائے کاش ہردم یارسولَ اللّٰہ

رہوں   ہر وقت میں   بادیدۂ نَم یارسولَ اللّٰہ

جِگر بھی سَوختہ جاں   سَوختہ، دِل چَاک سینہ چَاک

مِلے غم اور غم بس آپ کا غم یارسولَ اللّٰہ

نہیں   تاجِ شہی کی آرزو بس ایک ارماں   ہے

 



Total Pages: 406

Go To