Book Name:Wasail e Bakhshish

ہو گنبدِ خضرا کا دیدار مدینے میں   

دنیا کے غموں   کی تم للہ دوا دیدو

بُلوا کے غم اپنا دو سرکار مدینے میں   

مل جائے شِفا اسکو دربارِ محمد سے

آجائے جو کوئی بھی بیمار مدینے میں 

 

ہو ’’دعوتِ اسلامی‘‘ کی دھوم مچی ہر سُو

ترکیب ہو مرکز کی سرکار مدینے میں 

ٹھہرو گے شَفاعت کے حقدار یقیناً تم

آجاؤ گنہگارو! اِک بار مدینے میں 

اِخلاص عطا کردو اور خُلق بھلا کر دو!

بُلوا کے شہنشاہِ اَبرار مدینے میں 

بے جا نہ ہنسی آئے سنجیدہ بنا دیجے

بُلوا کے شہنشاہِ اَبرار مدینے میں 

اللّٰہکی الفت دو اور اپنی محبَّت دو

بُلوا کے شہنشاہِ اَبرار مدینے میں 

بیتاب جگر دیدو اور آنکھ بھی تَر دیدو

بُلوا کے شہنشاہِ اَبرار مدینے میں 

عِصیاں   کی دوا دیدو سرکار شِفا دیدو

بُلوا کے شہنشاہِ اَبرار مدینے میں 

اِس نَفسِ ستمگر کو قابو میں   مرے کردو!

بُلوا کے شہنشاہِ اَبرار مدینے میں

 

دنیا کی محبَّت سے دل پاک مِرا کر دو

بُلوا کے شہنشاہِ اَبرار مدینے میں 

رونا بھی سکھا دو اور سِکھلا دو تڑپنا بھی

بُلوا کے شہنشاہِ اَبرار مدینے میں 

آنکھوں   میں   سماجاؤ سینے میں   اُتر آؤ

 



Total Pages: 406

Go To