Book Name:Wasail e Bakhshish

کوشِش کرے کہ تُو تومُخلِص ہے، تیرا کوئی قُصُور نہیں  ، لوگ تجھے مجبور کرتے ہیں   ، اور یہ بھی بے چارے مَحَبَّت کی وجہ سے بخوشی ایسا کرتے ہیں   ، کسی کا دل نہیں   توڑنا چاہئے، تُو سب کچھ قَبول کر لیا کر اور یوں   بھی یہ تیرے لئے تبرُّک ہے۔نیز اگر کوئی نعت خواں   نابینا یا معذور ہو تو اُس کو وسوسے کے ذَرِیعے مات کرنا شیطان کیلئے مزید آسان ہو تا ہے۔ دیکھئے! نابینا ہو یابینا(یعنی دیکھتا) حکمِ شریعت ہر ایک کیلئے وُہی ہے جو میرے آقا اعلیٰ حضرت  رحمۃُ اللّٰہ تعالٰی علیہ کے فتاوٰی کی روشنی میں   بیان کیا گیا ۔ ہم سب کا اِسی میں   بھلا ہے کہ حرام کھانے، کِھلانے سے بچیں   ۔ نَفس کی چال میں   آ کرشَرعی فتاوٰی کے مقابلے میں   اپنی مَنطِق بگھار کر سادہ لوح عوام کو تو جھانسا دیا جاسکتا ہے مگر حرام پھر بھی حرام ہی رہے گا۔ اللّٰہ عَزَّوَجَلّ ہم سب کو حرام کھانے پہننے سے بچائے ۔

اٰمین بجاہ النبی الامین صَلَّی اللہ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلہٖ وَسَلَّم

حرام لقمے کی تباہ کاریاں 

                منقول ہے: آدمی کے پیٹ میں   جب حَرام کا لقمہ پڑا ، تو زمین و آسمان کا ہرفِرِشتہ اُس پر لعنت کریگا ، جب تک کہ وہ لقمہ اس کے پیٹ میں   رہے گا اور اگر اسی حالت میں   مریگا تو اس کا ٹھکانا جہنَّم ہو گا۔

                          ( مکاشَفَۃُ القُلُوب ص ۱۰)

نعت خوانی اِعزاز ہے

                پیار ے بلبلِ مدینہ ! جو نعت خوانی کی سعادت کے اِعزاز کو سمجھنے سے محروم ہو اسے حُبِّ مال و جاہ وغیرہ کی آفتیں   سرمایہ داروں   ، وزیروں   اور افسروں   وغیرہ کے یہاں   ہونے والی محفِلوں   میں   تو  (خدانخواستہ نُمائشی ہوئیں   تب بھی ) خوش دلی سے لے جائیں   گی مگر غریب اسلامی بھائی جو نہ ایکو ساؤ نڈ کی ترکیب بنا سکے نہ آؤ بھگت کر سکے نہ ہی غربت کے سبب بے چارہ کثیر افراد جمع کر سکے وہاں   جانے میں   اس کا دل گھبرائے گا، جی اُکتائے گا اور گلا بھی ’’ بیٹھ ‘‘ جائے گا ! جن کے دل میں   واقعی عشق ومحبت اور نعت خوانی کی حقیقی عَظَمت ہے ایسے عاشقانِ رسول کوغریبوں   کے یہاں   طالِب ثواب ہو کر حاضِری دینے میں   کون سی رکاوٹ آ سکتی ہے؟ امیر ہو یا غریب جو بھی شرعی تقاضوں   کے مطابق اِخلاص کے ساتھ اجتماع ذِکرو نعت کا اہتمام کرے گا اُس کا اور اُس میں   شریک ہونے والے ہر مسلمان کا اِنْ شَآءَ اللہ عَزَّوَجَلّبیڑا پار ہو گا۔

مصطَفٰے کی نعت خوانی سے ہمیں   تو پیار ہے           ان شاءَ اللّٰہ دوجہاں   میں   اپنا بیڑا پار ہے

نعت خوانی ایمان کی حفاظت کا ذریعہ ہے

        نعت خوانی حُضورِ پُرنور ، شافِعِ یومُ النُّشُورصَلَّی اللہ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلہٖ وَسَلَّمکی ثنا خوانی اور مَحَبَّت کی نشانی ہے



Total Pages: 406

Go To