Book Name:Karamaat e Farooq e Azam رضی اللہ تعالیٰ عنہ

قُرْبِ خاص

حضرتِ سیِّدُنا صِدِّیقِ اَکبر اور حضرتِ سیِّدُنا فاروقِ اَعظَم رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہ کو دُنْیَوِی حیات میں بھی اور بعدِ مَمات بھی سرورِ کائنات ،شَہَنْشاہ ِ موجودات صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ کا قُرْبِ خاصعطا کیا گیا چُنانچِہ عاشقِ مصطَفٰے، فِدائے جملہ صحابہ،مُحبِّ اَولیاء و اصفیا شاہ امام احمد رضاخان عَلَیْہِ رَحْمَۃُ الرَّحْمٰنفرماتے ہیں : ؎

محبوبِ ربِّ عَرش ہے اس سبْز قُبّے میں پہلو میں جلوہ گاہ عتیق وعُمَر کی ہے

سَعدَین کا قِران ہے پہلوئے ماہ میں جھرمٹ کئے ہیں تارے تجلِّی قمر کی ہے(1)

کسی اور محبت والے نے کہا ہے : ؎

حیاتی میں تو تھے ہی خدمتِ محبوبِ خالِق میں

مَزار اب ہے قریبِ مصطَفٰے فاروقِ اَعظَم کا

صَلُّوا عَلَی الْحَبِیْب! صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلٰی مُحَمَّد

صاحِبِ کرامات

بارگاہِ نُبُوَّت سے فیضیاب، آسمانِ رِفعت کے دَرَخْشاں ماہتاب حضرتِ سیِّدُنا عُمَر بن خَطّابرَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہ عاشقِ اکبرحضرتِ سیِّدُنا صِدِّیق اَکبر رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہ کے بعد

مـــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــدینـــہ

(1): سعدین دو سعید سیّاروں کے نام ہیں۔یہاں سَعَدین سے مراد حضرتِ سیِّدُنا صِدِّیقِ اَکبر اور حضرتِ سیِّدُناعُمَر فاروقِ اَعظم رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُمَا اور ماہ و قمر یعنی چاند رسولِ ذیشان صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ اور تارے 70ہزار ملائکہ ہیں جو مَزارِ پُر اَنوار پر چھائے ہوئے ہیں۔

 



Total Pages: 48

Go To