Book Name:Karamaat e Farooq e Azam رضی اللہ تعالیٰ عنہ

خدا کے فَضل سے میں ہوں گدا فاروقِ اعظم کا

(۱۹ شوال المکرم ۱۴۳۳ھ۔ بمطا بق6-09-2012)

خدا کے فَضْل سے میں ہوں گدا فاروقِ اعظم کا

کرم اللہ کا ہر دم نبی کی مجھ پہ رَحمت ہے

پسِ صدّیقِ اکبر مصطَفٰے کے سب صحابہ میں

گلی سے ان کی شیطاں دُم دبا کر بھاگ جاتا ہے

صحابہ اور اہلبیت کی دل میں محبت ہے

رہے تیری عطا سے یاخدا! تیری عنایت سے

بھٹک سکتا نہیں ہرگز کبھی وہ سیدھے رستے سے

خدا کی خاص رحمت سے محمد کی عنایت سے

سدا آنسو بہائے جو غَمِ عشقِ محمد میں

مجھے حجّ وزیارت کی سعادت اب عنایت ہو

الٰہی! ایک مدّت سے مِری آنکھیں پِیاسی ہیں

خدا اُن کا محمد مصطَفٰے فاروقِ اعظم کا

مجھے ہے دو جہاں میں آسرا فاروقِ اعظم کا

ہے بے شک سب سے اونچا مرتبہ فاروقِ اعظم کا

ہے ایسا رُعْب ایسا دبدبہ فاروقِ اعظم کا

بَفیضانِ رضا میں ہوں گدا فاروقِ اعظم کا

ہمارے ہاتھ میں دامن سدا فاروقِ اعظم کا

کرم جس بَخْت وَر پر ہو گیا فاروقِ اعظم کا

جہنَّم میں نہ جائے گا گدا فاروقِ اعظم کا

دے ایسی آنکھ یارب! واسِطہ فاروقِ اعظم کا

وسیلہ پیش کرتا ہوں خدا فاروقِ اعظم کا

دکھا دے سبز گنبد واسِطہ فاروقِ اعظم کا

شہادت اے خدا عطّارؔ کو دیدے مدینے میں

کرم فرما الٰہی! واسِطہ فاروقِ اعظم کا


 

 



Total Pages: 48

Go To