Book Name:Karamaat e Farooq e Azam رضی اللہ تعالیٰ عنہ

موجودات، مَحْبوبِ رَبُّ الْاَرْضِِ وَالسَّمٰوٰت صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ نے فرمایا: اَنْتَ مَعَ مَنْ اَ حْبَبْتَ۔ تم اُسی کے ساتھ ہوگے جس سے مَحَبَّت کرتے ہو۔ حضرتِ سیِّدُنا انَس رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہ فرماتے ہیں کہ ہمیں کسی خبر نے اِتنا خوش نہیں کیا جتنا سلطانِ دوجہان صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ کے اِس فرمانِ مَحَبَّت نشان نے کیا کہ تم اُسی کے ساتھ ہوگے جس سے مَحَبَّت کرتے ہو۔ پھر حضرتِ سیِّدُنا انَس رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہ فرماتے ہیں :میں حُضُور نبیِّ کریم ، رء ُوفٌ رَّحیم عَلَيْهِ أَفْضَلُ الصَّلاةِ وَالتَّسْلِيْم سے مَحَبَّت کرتا ہوں اورحَضراتِ ابو بکر و عُمَر رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہ سے بھی، لہٰذا اُمِّیدوار ہوں کہ اِن کی مَحَبَّت کے باعث اِن حضرات کے ساتھ ہوں گا اگرچِہ میرے اَعمال اِن جیسے نہیں۔( بُخاری ج ۲ ص۵۲۷حدیث۳۶۸۸)

ہم کو شاہِ بحرو بر سے پیار ہے اِنْ شَاءَ اللہ اپنا بیڑا پار ہے

اور ابُو بکْر و عُمرسے پیار ہے

اِنْ شَاءَ اللہ اپنا بیڑا پار ہے

عَظَمتِ صحابہ

دعوتِ اسلامی کے اِشاعَتی اِدارے مکتبۃُ المدینہ کی مطبوعہ 192 صفْحات پر مشتمل کتاب ، ’’ سَوانِحِ کربلا‘ ‘ صَفْحَہ31 پر حدیثِ پاک منقول ہے: حضرتِ سیِّدُنا عبدُ اللہ بنمُغَفَّل رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہ سے مروی ہے، محبوبِ ربُّ الْعِباد صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ کا فرمانِ حقیقت بنیاد ہے: میرے اَصحاب کے حق میں خدا سے ڈرو! خدا کا خوف کرو!! اِنہیں میرے بعد


 

 



Total Pages: 48

Go To