Book Name:Madani Channel Kay Baray Main Ulama o Shakhsiyaat Kay Tasurat - Qist 4

اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ رَبِّ الْعٰلَمِیْنَ وَ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلَامُ عَلٰی سَیِّدِ الْمُرْسَلِیْنَ ط

اَمَّا بَعْدُ فَاَعُوْذُ بِاللّٰہِ مِنَ الشَّیْطٰنِ الرَّجِیْمِ ط  بِسْمِ اللہ  الرَّحْمٰنِ الرَّ حِیْم ط

            مَدَنی چینل کے بارے میں عُلَماء و شَخْصیّات

                       کے تأثُّرات کے اِقتِباسات   (قِسْط چہارُم)

   دُرُود شریف کی فضیلت

       حضرتِ سیِّدُنا امام محمد بن عبدالرحمن سخاوی رَحْمَۃُ اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ نقل فرماتے ہیں :  ’’اللّٰہ  عَزَّ وَجَلَّ نے حضرت سیِّدُنا موسیٰ کلیم اﷲ عَلٰی نَبِیِّناوَعَلَیْہِ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلام کی طرف وحی فرمائی کہ مَیں نے تجھ میں دس ہزار کان پیدا فرمائے، یہاں تک کہ تُو نے میرا کلام سُنا اور دس ہزار زبانیں پیدا فرمائیں جن کے ذریعے تُونے مجھ سے کلام کیا۔ تُو مجھے بَہُت زِیادہ محبوب اور میرے نزدیک ترین اُس وقت ہوگا جب تُو میرا ذکر کرے گا اور مُحمَّد (صَلَّی اللہ  تَعَالٰی علیہ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم ) پر کثرت سے دُرُود بھیجے گا۔‘‘(اَلقَولُ البَدِیْع ص۲۷۵۔۲۷۶ مؤسسۃ الریان بیروت)

صَلُّوا عَلَی الْحَبِیب !   صلَّی اللّٰہُ تعالٰی علٰی مُحمَّد

مَدَنی چینل ’’پیغام ِحق ‘‘ کو عام کرنے کا مؤثر ذریعہ

        حق وباطل کامقابلہ انسان کی آفرینش (پیدائش)سے جاری ہے ، حضرت سیِّدُنا آدم صفی اللہ  عَلٰی نَبِیِّناوَعَلَیْہِ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلامکے مقابلے میں ابلیس، حضرت ہابیل رَحْمَۃُ اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ کے مقابلے میں قابیل ، حضرت سیِّدُنا ابراہیم عَلٰی نَبِیِّناوَعَلَیْہِ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلام کے مقابلے میں نمرود، حضرت سیِّدُنا موسیٰ عَلٰی نَبِیِّناوَعَلَیْہِ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلامکے مقابلے میں فرعون اورہمارے پیارے پیارے آقا حضرت محمدمصطفٰیصَلَّی اللہ  تَعَالٰی علیہ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم  کے مقابلے میں ابولہب وابوجہل وغیرہ۔ اس طرح ہرزمانہ میں باطِل مختلف اشخاص اور صورتوں میں حق سے نبرد آزما رہا ہے لیکن فتح ہمیشہ حق کو حاصل ہوئی اورباطِل کو شکست کا منہ دیکھنا پڑا کیونکہ اللّٰہ  تَعَالٰی کا فرمان ہے :

وَ قُلْ جَآءَ الْحَقُّ وَ زَهَقَ الْبَاطِلُؕ-اِنَّ الْبَاطِلَ كَانَ زَهُوْقًا(۸۱) (پ۱۵بَنِی اِسراء یل۸۱)

 امام اہلسنّت ، اعلیٰ حضرت ، مجدِّد دین وملّت مولانا شاہ امام احمد رضا خانعَلَیْہِ رَحْمَۃُ الرَّحْمٰن اپنے شہرۂ آفاق ترجمۂ قرآن  کَنزُالایمان میں اس کا ترجمہ یوں فرماتے ہیں :  ’’اورفرماؤ کہ حق آیا اور باطل مٹ گیا۔ بے شک باطل کو مٹنا تھا۔‘‘ہمارا یہ دور میڈیا کا دور ہے، الیکڑانک میڈیا افکارو نظریات پھیلانے کا بہترین و مؤثر ذریعہ ہے ۔بَہُت سے لوگوں نے اپنے مخصوص نظریات و مُعتَقَدات پھیلانے کے لئے مختلف ناموں سے چینلز شروع کررکھے ہیں اور وہ اپنے گمراہ کن اور باطِل نظریات کو شب و روز پھیلا رہے ہیں اور اُمتِ مسلمہ کو گمراہ کرنے کے لئے شیطانی سازشیں کر رہے ہیں ۔ جس کے سبب ہماری جوان نسل خاص طور پر گمراہی اور بے راہ رَوی کا شکار ہوتی جارہی ہے۔ ان کی شَر انگیزیاں کسی سے ڈھکی چُھپی نہیں ۔ ضرورت تھی کہ صدائے حق کو بلند کیا جائے۔ جتنی طاقت و جوش سے باطِل اپنے بازوؤں سے کائنات کی رُوح مکدر کررہا ہے۔اِتنا ہی طاقت وقوت سے حق کی آواز کو بلند کیا جائے۔ اَلْحَمْدُ لِلّٰہ  عَزَّ وَجَلَّ  ’’دعوتِ اسلامی‘‘ کی مرکزی مجلس شوریٰ نے مَدَنی چینلکا آغاز کرکے پوری قوم کے اِس قرض سے باحسن صورت عہدہ بَرآ ہوچکی ہے۔ عقائدِ صحیحہ کی ترویج و اشاعت کی خاطر او ر قوم مسلم کو فاسد و کاسد خیالات سے محفوظ رکھنے کے لیے مَدَنی چینل کا آغاز معاشرے کے مرض کا برمحل علاج ہے۔ مَدَنی چینل سے بَہُت سے لوگوں کی غلط فہمیوں کا ازالہ ہورہا ہے اور کتنے لوگ حلقہ بگوش اِسلام ہورہے ہیں ۔کتنے مسلمان غلط روی سے راہِ راست اپنا رہے ہیں ۔ اس کے ذریعے اللّٰہ  تَعَالٰی کی وحدانیت کے نُور اور شمعِ رسالت صَلَّی اللہ  تَعَالٰی علیہ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم  کی نورانی کِرنوں سے قلوب و اذہان کی دُنیا کو مُنوّر کیا جارہا ہے ۔اس طرح باطِل کی پھیلائی ہوئی تاریکی ’’فیضان ِ مدینہ‘‘ کے نُور سے روشن ہورہی ہے۔ یہ اسلام کے عِطْر کی ایسی مَدَنی مہک ہے جو دُنیا بھرکو مُعطَّرکرنے کا سامان ہے ۔ اس سے حق کا بول بالا اورمسلمانو ں کا منہ اُجالاہورہا ہے ۔ اَلْحَمْدُ لِلّٰہ  عَزَّ وَجَلَّ  کَثِیْرعُلَماء وشخصیّات نے مَدَنی چینلکے اِنقلابی اِقدام پردعوتِ اسلامی کی مَجلِس رابِطَہ بِالعُلَمَاء وَالمَشائِخ اور دیگر مُبلِّغِین کے ذریعے اپنے تأثرات سے نوازا ہے جن کے اقتباسات حسبِ ذیل ہیں :

(189) حضرت مولاناقاری محمد خان قادری  مُدَّظِلُّہُ العَالِی

(مہتمم جامعہ غوثیہ تعلیم القرآن ، خطیب جامع مسجد زینب، فاروق کالونی والٹن ، مرکزالاولیاء لاہور)

        مَدَنی چینل کا قیام بَہُت اچھا اقدام ہے۔ یہ ایک بَہُت بڑا میدان جو تبلیغی اعتبار سے خالی چلا آرہا تھا اس کو پُر کرنے کی عملی کوششیں کی گئیں ہیں ۔ میرے خیال میں اگر ہم حالاتِ حاضرہ کے تقاضوں کے مطابق صحیح پیغام پہنچانے کی کوشش کریں تو کہیں بہترین نتائج حاصل کرسکتے ہیں ۔

صَلُّوا عَلَی الْحَبِیب !   صلَّی اللّٰہُ تعالٰی علٰی مُحمَّد   

(190)حضرت مولانا محمدجان چوہان  مُدَّظِلُّہُ العَالِی

(مرکزی نشرواشاعت جماعت اہلسنّت، احمد پور شرقیہ، بہاولپور ، پاکستان)

        مَدَنی چینل کی آمد سے مسلمانوں کو رہنمائی کا حصہ ملا۔

صَلُّوا عَلَی الْحَبِیب !  صلَّی اللّٰہُ تعالٰی علٰی مُحمَّد

(191)حضرت مولانا قاری محمد اشفاق اعوان  مُدَّظِلُّہُ العَالِی

 



Total Pages: 12

Go To