Book Name:Chanday Kay Baray Main Sawal Jawab

مسلمان کی بے عزَّتی کرنا ہے ۔ ‘‘ ( اَلْمُعْجَمُ الْاَ وْسَط لِلطَّبَرَانِی، ج۵ ص ۲۲۷حدیث ۷۱۵۱)

{۳}پیٹ میں  سانپ

          حُضُورنبیِّ کریم صَلَّی اللہُ تَعَالٰی علیہ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم کا ارشادِ عبرت بُنیادہے :  معراج کی رات میرا گزر کچھ ایسے لوگوں  پر ہوا جن کے پیٹ گھروں  کی طرح تھے جن میں  سانپ تھے جوپیٹوں  کے باہر سے بھی نظر آرہے تھے ، میں  نے جبرئیل (عَلَیْہِ السَّلام) سے دریافت فرمایا :  ’’یہ کون ہیں  ؟ ‘‘ تو انہوں  نے بتایا : ’’یہ سود کھانے والے ہیں  ۔ ‘‘ ( ابن ماجہ ج۳ ص۷۲ حدیث ۲۲۷۳)

            مُفَسّرِشہیرحکیمُ الْاُمَّت حضر  ت ِ مفتی احمد یار خان عَلَیْہِ رَحْمَۃُ الحَنّان اس حدیثِ پاک کے تحت فرماتے ہیں  : آج اگر ایک معمولی کیڑا پیٹ میں  پیدا ہوجائے تو تندُرُستی بگڑ جاتی ہے ، آدَمی بیقرار ہو جاتا ہے تو سمجھ لو کہ جب اُس کاپیٹ سانپوں  بچھوؤں  سے بھر جائے تو اُس کی تکلیف وبیقراری کا کیا حال ہو گا! رب(عَزَّوَجَلَّ )کی پناہ ۔      (مِراۃُ المَناجِیح ج۴ ص۲۵۹)

   مدرَسے میں  آنے والے مہمانوں  کی خاطر تواضُع

سُوال : دعوتِ اسلامی کے جامعۃُ المدینہ میں  مہمان آتے ہیں  ، اُن کی خیر خواہی یعنی کھانا اور چائے پانی وغیرہ جامعۃ المدینہ کے چندے سے کر سکتے ہیں  یا نہیں ؟

جواب :  کوئی سابھی دینی مدرسہ ہو سب کیلئے یہ مسئلہ ہے کہ جتناعرف جاری ہو اُتنی مہمان نوازی کر سکتے ہیں  مگر واقِعی مہمان ہونے چا ہئیں جیسا کہ عُلَماء ومَشائخ کرام اور شخصیّات دعوتِ اسلامی کے مختلف جامعۃُ المدینہ کے دَورے پر تشریف لاتے ہیں ۔ ان حضرات کی ان کے ساتھ خصوصی طور پر تشریف لائے ہوئے رفقا سمیت خیرخواہی(خاطر تواضُع )  کر سکتے ہیں  ۔ ضَرورتاً میزبانی کرنے والے بھی مہمانوں  کے ساتھ کھانے پینے میں  شریک ہوسکتے ہیں ۔ خلافِ عُرف و عادت اپنے دوستوں  اور رشتے داروں  کو ٹھہرانااور کھلانا پلانا روا (یعنی جائز )نہیں  ۔

غیرِ مُستَحِق نے مدرَسے کا کھانا کھا لیا تو ؟

سُوال :  اگر مدرَسے کے طَلَبہ کا کھانا کسی غیر حقدار نے کھا لیا تو گناہ و تاوان کس پر؟

جواب : اگر مدرَسے کی اِنتِظامیہ کے مقرَّر کردہ ذِمّہ دار یا کھانا تقسیم کرنے والے نے جان بوجھ کر غیر حقدار کو خود کھانا دیا تو گنہگار ہواتوبہ بھی کرے اور تاوان بھی دے ۔  اگر کھانے والے کو بھی پتا ہے کہ میں  حقدار نہیں ہوں  تو یہ بھی گنہگار ہے مگر اِس صورت میں  اِس پر تاوان نہیں  ، توبہ کرے ۔ اگر مدرَسے کا کھانا طلبہ میں  بانٹا جارہا تھا اور اس میں  کوئی غیر حقداربھی شریک ہوگیا تو اِس صورت میں  تاوان کھانے والے پر ہوگا بانٹنے والے پر نہیں  ۔

مَسئَلہ معلوم نہ ہو اور کھا لیا تو؟

 



Total Pages: 50

Go To