Book Name:Sharah Shajra Shareef

گلزار : باغ   

دُعائیہ شعر کا مفہوم :

         یا اللّٰہ عَزَّوَجَلَّ  حضرتِ سیِّدُنا شیخ ابراہیم ایرجی رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِکے صدقے میرے غموں کی آگ بجھادے اورحضرتِ سیِّدُنا نظام الدین عرف شاہ بھکاری رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِکے طفیل مجھے رَحمتوں کیبھیکدے ۔اٰمِیْن بِجَاہِ النَّبِیِّ الْاَمِیْن صَلَّی اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلہٖ وَسَلَّم

وضاحت :

        ’’ ابراہیم‘‘کے ساتھ’’ نارِغم‘‘ کا تذکرہ گویا اس طرف اشارہ کررہا ہے کہ  یااللّٰہ عَزّوَجَلَّ ! تیری اس رَحمت کا صدقہ جو تونے حضرت ابراہیم خلیل اللہ  عَلٰی نَبِیِّنَا وَعَلَیْہِ الصَلاۃُ وَالسَّلاَم پر فرمائی اور نمرود کی لگائی ہوئی آگ کو گل گلزار بنادیا ہمارے غموں کی آگ بھی گلزار بنادے ۔

صَلُّو ا عَلَی الْحَبِیب !      صلَّی اللّٰہُ تعالٰی علٰی محمَّد

 تذکرہ :

        اس شعر میں سلسلہ ٔ عالیہ قادریہ رضویہ عطّاریہ کے چھبیسویں اور ستائیسویں شیخِ طریقت یعنی حضرتِ سیِّدُنا شیخ ابراہیم ایرجی رَحْمَۃُ اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِاورحضرتِ سیِّدُنا نظام الدین عرف شاہ بھکاری رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِکے وسیلے سے دُعا کی گئی ہے ۔ ان دونوں بُزُرگوں رَضِیَ اللہ  تَعَالٰی عَنْہُمَاکے مختصر حالاتِ زندگی ملاحظہ ہوں :

(26)حضرتِ سیِّدُنا شیخ ابراہیم ایرجی علیہ رحمۃ اللہ  الھادی

        حضرتِسیِّدابراہیم ایرجی رَحْمَۃُ اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِکی ولادتِ باسعادت ’’ایرج‘‘ کے مَقام میں ہوئی ، اسی نسبت سے آپ کو ایرجی کہا جاتا ہے ۔آپ کے والد ماجد کانام حضرت سید معین بن عبدالقادر رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِہے ۔ آپ رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِنے علمِ شریعت و طریقت پانے کے لئے وقت کے جید علماء و مشائخ کرام سے اِستفادہ کیا اور اپنے شیخِ طریقت شیخ بہاؤالدین جنیدی رَحْمَۃُ اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِسے علمِ طریقت اَخذ کیا۔ آپ رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِکا دَستور تھا کہ لوگوں کی جہالت ، ناقدری اور ناانصافی کی وجہ سے گوشہ نشین ہوکر کتابوں کا مطالعہ فرماتے اور ان کی تصحیح فرماتے۔ آپ رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِکی وفات پاک ۵ ربیع الثانی ۹۵۳؁ھ میں ہوئی ۔مزار شریف دہلی (ہند) میں اِحاطہ دَرگاہ ِحضرت نظام الدین اولیاء رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِمیں واقع ہے۔

اللّٰہ  عَزّوَجَلَّ  کی اِن پر رحمت ہو اور اِن کے صد قے ہماری مغفِرت ہو

صَلُّو ا عَلَی الْحَبِیب !        صلَّی اللّٰہُ تعالٰی علٰی محمَّد

(27)حضرتِ سیِّدُنا نظام الدین علیہ رحمۃ اللہ  المُبین

        حضرتِسیِّدُناقاری نظام الدین رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِقصبہ کا کوری ضلع لکھنؤ (ہند)میں ۸۹۰ ھ میں پیدا ہوئے ۔مُریدین وخلفاء کے درمیان بھکاری کے نام سے مشہور ہیں چنانچہ شجرہ عالیہ میں اسی نام سے یاد کئے گئے ہیں ۔ان کا یہ لقب غالباًاس لئے مشہور ہوا کہ یہ بارگاہِ ربّ العزت میں مانگنے سے نہیں شرماتے تھے ، (معاذ اللہ  عَزَّوَجَلَّ) مالداروں سے مانگنے والے بھِکاری نہ تھے ۔

        آپ رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِکے والدِ ماجد حضرت سیدنا سیف الدین علیہ رحمۃ اللہ  المُبین اپنے وقت کے بڑے مایہ ناز عالم اور قرا ء ت ِ سبعہ کے مسلّم امام تھے ۔ انہی کی نگرانی میں آپ نے عُلومِ عقلیہ و تفاسیر و تجوید نیز اعمال و اَذکار حاصل کئے۔ آپ رَحْمَۃُ اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِکو بَیْعَت کا شرف حضرتسَیِّدابراہیم ایرجی رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِسے حاصل تھا اوراُن ہی سے خرقہ خلافت و اجازت حاصل ہوا تھا۔آپ رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِنے متعدد بار حضور سرورِکائنات صَلَّی اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَ کی زیارت کی اور بارگاہ ِرسالت صَلَّی اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمَسے عظیم بشارتوں سے فیض یاب ہوئے ۔ اکثر مرتبہ سرکار ِغوثیت مآب رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہکی بھی زیارت فرمائی ۔چنانچہ آپ ارشاد فرماتے ہیں کہ میں اکثر زیارت ِحضرت غوث پاک رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہسے مشرف ہواہوں مگر حضرت غوث اعظم رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہکو تنہا کبھی بھی نہیں دیکھا بلکہ آپ رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہکے ساتھ شہاب الدین عمر سہر وردی رَحْمَۃُ اللہ  تَعَالٰی عَلَیْہِبھی ہوتے ہیں ۔91برس کی عمر میں ۹ ذیقعدہ۹۸۱ھ کو آپ کا وِصال ہوا۔ آپ رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِکامزار ِمُبارَک قصبہ کاکوری کے وسط میں محلہ جھنجھری میں واقع ہے۔

اللّٰہ  عَزّوَجَلَّ  کی اِن پر رحمت ہو اور اِن کے صد قے ہماری مغفِرت ہو

صَلُّو ا عَلَی الْحَبِیب !    صلَّی اللّٰہُ تعالٰی علٰی محمَّد

(13)خانۂ دل کو ضیا ء د ے روئے ایماں کو جمال

 شہ ضیاء   مولیٰ جمالُ الاولیا ء  کے واسِطے  (رَحْمَۃُ اللہِ تَعَالٰی عَلَیْہِ)

مشکل الفاظ کے معانی :

ضیاء : نُور، روشنی

روئے ایماں : ایمان کا چہرہ

جمال : خوبصورتی

 



Total Pages: 64

Go To