Book Name:Imam Malik Ka Ishq-e-Rasool

اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ رَبِّ الْعٰلَمِیْنَ وَالصَّلٰوۃُ وَالسَّلَامُ عَلٰی سَیِّدِ الْمُرْسَلِیْنَ ط

اَمَّا بَعْدُ فَاَعُوْذُ بِاللہِ مِنَ الشَّیْطٰنِ الرَّجِیْمِ ط بِسْمِ اللہِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِیْمِط

امام مالِک کا عشقِ رَسُول([1])

شیطان لاکھ سُستی دِلائے یہ رِسالہ(۱۸صَفحات) مکمل پڑھ لیجیے اِنْ  شَآءَ اللّٰہ  معلومات کا اَنمول خزانہ  ہاتھ آئے  گا۔

دُرُود شریف کی فضیلت

فَرمانِ مصطفےٰصَلَّی اللّٰہُ عَلَیْہِ وَاٰلہٖ وَسَلَّم ہے: جس نے کتاب مىں مجھ پر دُرُودِ پاک لکھا جب تک مىرا نام اس مىں رہے گا فرشتے اس کے لىے اِسْتِغْفار کرتے رہىں گے۔([2])

صَلُّوْا عَلَی الْحَبِیْب!                                                                                                صَلَّی اللہُ عَلٰی مُحَمَّد

امام مالِک کے عشقِ رَسُول کے واقعات

سُوال: امام مالک رَحْمَۃُ اللّٰہِ عَلَیْہِ کے عشقِ رَسُول کے واقعات بىان فرمادىجیے ۔(سمہ سٹہ ضلع بہاولپور پنجاب سے سُوال)

جواب:سُبْحٰنَ اللہ!حضرتِ سَیِّدُنا امام مالک رَحْمَۃُ اللّٰہِ عَلَیْہِ کا عشقِ رَسُول بہت مشہور ہے۔حضرتِ سَیِّدُنا مصعب بِن عبدُاللہ رَحْمَۃُ اللّٰہِ عَلَیْہِ  فرماتے ہىں:جب حضرتِ سَیِّدُنا امام مالکرَحْمَۃُ اللّٰہِ عَلَیْہِ کے سامنے رَحمتِ عالَم صَلَّی اللّٰہُ عَلَیْہِ وَاٰلہٖ وَسَلَّم کا ذِکر ِ مُبارَک کىا جاتا تو آپ کے چہرے کا رنگ تبدىل ہو جاتا اور کمر  مُبارَک جُھک جاتى ىعنى اتنا خُشُوع آپ پر طارى ہو جاتا تھا۔ حاضِرىن نے امام مالک  رَحْمَۃُ اللّٰہِ عَلَیْہِ سے پوچھا کہ سرکار صَلَّی اللّٰہُ عَلَیْہِ وَاٰلہٖ وَسَلَّمکا نامِ مُبارَک یا ذِکر شرىف سُن کر آپ کى ىہ کىفىت کىوں ہوجاتى ہے؟ فرمانے لگے: جو کچھ مىں نے دىکھا ہے اگر تم دىکھتے تو مجھ سے اِس طرح کا سُوال نہ کرتے ۔میں نے قارىوں کے سردار سَىِّدُنا محمد بن منکدررَحْمَۃُ اللّٰہِ عَلَیْہِ سے جب بھى کوئى حدىثِ پاک پوچھى تو وہ عظمتِ حدىث اور ىاد


 

 



1       یہ رِسالہ۲۳رَجَبُ الْمُرَجَّب ۱۴۴۰؁ھ بمطابق 30 مارچ 2019 کو عالمی مَدَنی مَرکز فیضانِ مدینہ بابُ المدینہ(کراچی) میں ہونے والے مَدَنی مذاکرے کا تحریری گلدستہ ہے ، جسے اَلْمَدِیْنَۃُ الْعِلْمِیَّۃ کے شعبے’’فیضانِ مَدَنی مذاکرہ‘‘نے مُرتَّب کیا ہے۔ (شعبہ فیضانِ  مَدَنی مذاکرہ)       

2       معجمِ اوسط ، من اسمہ احمد ، ۱ / ۴۹۷ ، حدیث:۱۸۳۵ دارالکتب العلمية بیروت



Total Pages: 17

Go To