Book Name:Bachon Ki Zid Khatam Karnay Ka Wazifa

مَزارات پر خوشبو لگانا کیسا؟

سُوال : کیا اللہ پاک کے کسی ولی کے مَزار پر اچھی نیت کے ساتھ خوشبو لگا سکتے ہیں؟ (SMS کے ذَریعے سُوال)

جواب : مَزار پر خوشبو لگانے کا حکم تو کہیں پڑھا نہیں اور نہ مجھے اِس مسئلے کا عِلم ہے ، البتہ لوگوں میں یہ بات رائج ہے ۔ مَزارات پر عطر وغیرہ چِھڑکنے کے بجائے اُس عطر کی رَقم مثلاً 100روپے صاحبِ مزار کے اِیصالِ ثواب کی نیت سے کسی غریب کو دے دیں گے تو زیادہ بہتر ہوگا، اس غریب کی دِل جوئی بھی ہوگی اور صاحبِ مزار کے لیے اِیصالِ ثواب کا سِلسِلہ بھی ہو جائے گا ۔ خود غور کیجیے کہ چادر چڑھانے یا عطر چھڑکنے سے زیادہ فائدہ ہو گا یا اِس طرح اِیصالِ ثواب کرنے سے زیادہ فائدہ ہو گا ۔  البتہ مزار پر چادر چڑھانا اور پھول رکھنا جائز ہے ۔  بہرحال مزار شریف یا اس کی چادروں پر جو عطر چِھڑکا جاتا ہے اس سے صِرف لمحے بھر کے لیے خوشبو آتی ہے پھر پتا بھی نہیں چلتا کہ یہاں عطر چھڑکا گیا تھا  کیونکہ چادر کے اوپر پھولوں کا اَنبار لگا ہوا ہوتا ہے اگربتیاں الگ سُلگ رہی ہوتی ہیں جس سے عطر کی خوشبو معلوم نہیں ہوپاتی ۔  پھر ہر عطر اتنا پاور فل ہو کہ جس کی خوشبو  بَرقرار رہے ضَروری نہیں بلکہ مَزارات پر جو عطر بِک رہے ہوتے ہیں ان کی بھی کوئی خاص کوالٹی نہیں ہوتی ۔  اگر وہ کوئی خاص عطر ہو بھی تو مَزار کی چادر پر چھڑکنے کا مسئلہ مجھے معلوم نہیں ہے کہ آیا اس سے تعظیم مقصود ہوتی ہے یا کیا مُعاملہ ہوتا ہے اور اِس طرح عطر چھڑکنے سے تعظیم ہو سکتی ہے یا نہیں؟  

عطر چِھڑکنے میں اِحتیاط کیجیے

ایک مَرتبہ جُلُوسِ میلاد کے موقع پر کسی نے مجھ پر عطر چِھڑکا جو اُڑ کر میری آنکھ میں آگیا اس کے بعد بقیہ جُلُوس میں  مجھ پر کیا گزری ہوگی یہ  ہر سمجھدار شخص سمجھ سکتا ہے ۔ خُدا جانے اس نے میری تعظیم کے لیے ایسا کیا تھا یا کچھ اور نیت تھی، نہ جانے وہ کیا ثواب لے کر گیا ہو گا ۔ ایسے لوگ ”چِھڑکو“ہوتے ہیں، ان کی پارٹی سرکار صَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلہٖ وَسَلَّم کے رَوضۂ اَنور کی جالی مُبارَک کے پاس موجود زائرین پر بھی اسپرے کر دیتی ہے میں نے خود ان کو ایسا کرتے دیکھا ہے ۔ ان کو اس کا بھی خیال نہیں ہوتا کہ کوئی وہاں سر جُھکائے آنکھیں بند کیے کھڑا ہے یا تَصَوُّر میں کہیں پہنچا ہوا ہے اور اس ”چِھڑکو پارٹی“کے لوگ آ کر اس پر اسپرے کر دیتے ہیں، وہ زائر کہیں پہنچا بھی ہوگا تو واپس آ جائے گا  اور یہ لوگ سمجھتے ہوں گے کہ شاید ہم نے زائر  رَوضۂ انور کو مُعَطَّر کر کے کوئی بہت بڑا تیر مارا ہے ۔   

عطر لگانے میں دوسروں کا لحاظ کیجیے

میرا تجربہ ہے کہ بعض خوشبوئیں بعض لوگوں کو مُوافق نہیں آتیں، ہزار قسم کی خوشبوئیں ہوتی ہیں بعض خوشبوئیں بعض لوگوں کے لیے الرجی کا باعِث بھی بن جاتی ہیں کہ وہ  خوشبو سونگھتے ہی  چھینکیں مارنا شروع کر دیتے ہیں، جیسے ہی وہ خوشبو ان کے سر تک پہنچتی ہے ان کا سر بھی دَرد کرنا شروع  ہو جاتا ہے اور وہ بے چارے اپنا سر پکڑ کر بیٹھے رہتے ہیں ۔  خوشبو لگانے والا اپنے زُعم میں ان کو مُعَطَّر کرتا ہے مگر وہ بے چارے آزمائش میں آجاتے ہیں ۔ اسی وجہ سے ہمارے یہاں عطر لوگوں کے ہاتھ پر لگانے کا رَواج ہے مگر پھر بھی سامنے والے سے پوچھ کر عطر لگایا جائے  ۔  کیمیکل والی خوشبو بھی ہوتی ہے جو ہاتھ پر لگائی جائے تو کھال پر لگے ہوئے بال اُڑا دیتی ہے ۔   

اِس کے عِلاوہ یہ بھی دیکھا ہے کہ لوگ مسجد کی دَری پر عطر کی شیشی چِھڑکتے ہیں جس کی وجہ سے مسجد کی دَری پر دَھبا آتا اور اس پر میل جم جاتا ہے ۔ یُوں عارضی خوشبو کی مہک آئے بھی تو نتیجتاً دَری خراب ہو جاتی ہے تو یہ مسجد کو فائدہ ہونے کے بجائے نقصان ہی ہوا ۔   

مَساجد  کو خوشبودار رکھنے کا طریقۂ  کار

سُوال : مَساجد  کو خوشبودار  رکھنے  کے لیے کیا  طرىقۂ  کار اِختیار کیا جائے ؟  

جواب : مَساجد کو  خوشبودار رَکھنے کے لیے خوشبودار اگر بتىاں جَلائى جا سکتى ہىں اور اسی طرح آج کل خوشبودار اسپرے آتے ہىں ىہ بھى چھڑکے جا سکتے ہىں البتہ  طِبّی طور پر  ىہ چىزىں نُقصان دہ  مانى جاتى ہىں جبکہ اَصلی لُوبان فائدہ مند ہوتا ہے اور اس کے فَوائد بھی میں نے پڑھے ہیں ۔  اگر بتیاں اور دِیگر خوشبوئیں کیمیکل والی  ہوتى ہیں، لوبان بھی اگر  کیمیکل والا ہو تو وہ بھی نُقصان دہ ہو سکتا ہے ۔  مَساجد میں اگربتیاں جَلاتے ہوئے اِس بات کا خیال رکھیں کہ  خوشبو معتدل اور بھینی بھینی ہونی چاہیے کہ جس سے کسی نمازی اور دِیگر موجود لوگوں  کو تکلیف نہ ہو ۔  ورنہ اگر کوئی نماز پڑھ رہا ہے یاقرآنِ پاک کی تلاوت کر  رہا ہے اور آپ نے اگر بتیوں کے دھوئیں چھوڑ دیئے تو وہ چھینکیں مار مار کر کے بھاگ جائے گا تو یوں آپ اُسے نفع نہیں نقصان پہنچائیں گے ۔ اگر اللہ  پاک توفیق دے تو مَساجد میں خوشبو کے لیے عُود سُلگایا جائے مگر اصلی عُود اتنا مہنگا ہے کہ اس کے بارے میں  بطورِ مُبالغہ محاورتاً یہ کہا جا سکتا ہے کہ  اگر آپ خود بھی بِک جائیں تب بھی نہیں مل پائے گاکیونکہ



Total Pages: 11

Go To