Book Name:Zoq-e-Naat

پر ’’  بِسْمِ اللّٰہِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِیْم ‘‘ لکھاتھا۔(تفسیر کبیر ، ۱ / ۱۵۵، داراحیاء التراث العربی بیروت)

عرض سلام بدرگاہ خیرالانام عَلَیْہِ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلَام

اَلسَّلَام اے خسروِ دنیا و دِیں

اَلسَّلَام اے راحت جانِ حزیں

 

اَلسَّلَام اے بادشاہِ دو جہاں

اَلسَّلَام اے سرورِ کون و مکاں

 

اَلسَّلَام اے نورِ ایماں اَلسَّلَام

اَلسَّلَام اے راحتِ جاں اَلسَّلَام

 

اے شکیبِ جانِ مضطر اَلسَّلَام

آفتابِ ذَرّہ پروَر اَلسَّلَام

 

دَرد و غم کے چارہ فرما اَلسَّلَام

دَرد مندوں کے مسیحا اَلسَّلَام

 

اے مرادیں دینے والے اَلسَّلَام

دونوں عالم کے اُجالے اَلسَّلَام

 

دَرد و غم میں مبتلا ہے یہ غریب

دَم چلا تیری دُہائی اے طبیب

 

نبضیں ساقط رُوح مضطر جی نڈھال

دَردِ عصیاں سے ہوا ہے غیر حال

 

بے سہاروں کے سہارے ہیں حضور

حامی و یاوَر ہمارے ہیں حضور

 

ہم غریبوں پر کرم فرمائیے

بد نصیبوں پر کرم فرمائیے

 

بے قراروں کے سرہانے آئیے

دِلفگاروں کے سرہانے آئیے

 

جاں بلب کی چارہ فرمائی کرو

جانِ عیسٰی ہو مسیحائی کرو

 

شام ہے نزدیک منزل دُور ہے

 



Total Pages: 158

Go To