Book Name:Dilchasp Malomaat Sawalan Jawaaban Part 02

جواب     توبہ اور استغفار میں فرق یہ ہے کہ جو گناہ ہو چکے ان سے معافی مانگنا استغفار ہے اور پچھلے گناہوں پر شرمندہ ہو کر آئندہ گناہ نہ کرنے کا عہد کر نا توبہ ہے ۔  (  [1])

سوال      استغفار کے لیے بہتر وقت کونسا ہے ؟

جواب     بہتر یہ ہے کہ نمازِ فجر کے وقت سنتِ فجر کے بعد فرض سے پہلے 70بار پڑھا کرے کہ یہ وقت استغفار کے لیے بہت ہی موزوں ہے ، رب تعالیٰ فرماتاہے :  ( وَ بِالْاَسْحَارِ هُمْ یَسْتَغْفِرُوْنَ(۱۸)) (  پ۲۷ ، الذٰریٰت : ۱۸) ترجمۂ کنز الایمان : اور پچھلی رات اِستغفار کرتے ۔   (  [2])

سوال      بندوں کو بھٹکانے کی قسم کھانے پر شیطان کو بارگاہِ الٰہی سے کیا جواب مِلا؟

جواب     حضرت سیدنا ابو سعید رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہسے مروی ہے کہ حضورِاکرم ، شفیعِ اعظم صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم ارشاد فرماتے ہیں : شیطا ن نے کہا :  اے میرے رب !  تیری عزت و جلال کی قسم ! جب تک تیرے بندوں کی روحیں ان کے جسموں میں ہیں ، میں انہیں بھٹکاتا رہوں گا ۔ اللہ عَزَّ  وَجَلَّنے ارشاد فرمایا :  میری عزت و جلا ل کی قسم !  جب تک وہ مجھ سے استغفار کرتے رہیں گے میں انہیں معاف کرتا رہوں گا ۔  (  [3])

سوال      حضرات انبیائے کرام عَلَیْہِمُ السَّلَامکے بکثرت استغفار کی حکمت بیان کیجئے ؟

جواب     انبیائے کرام عَلَیْہِمُ الصَّلٰوۃُ وَالسَّلَاممعصوم ہیں ، اُن سے گناہ صادِر نہیں  ہوتے ۔  اُن کا اِستغفار کرنا در اصل اپنے رب تعالیٰ کی بارگاہ میں  عاجزی و اِنکساری کا اظہار ہے اوراس میں  اُمَّت کو یہ تعلیم دینا مقصود ہے کہ وہ مغفرت طلب کرتے رہا کریں ۔  (  [4])

سوال      معاشی ومعاشرتی زندگی میں استغفار کے کیا فوائد ہیں؟

جواب     حضرت سیدنا عبداللہ بن عباس رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہُمَاسے مروی ہے کہ حضور رسولِ کریم صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمنے ارشاد فرمایا : جس نے استغفار کو اپنے لئے لازم کرلیا اللہ عَزَّ  وَجَلَّ اسے ہر غم اور تکلیف سے نجات دے گا اور اسے ایسی جگہ سے رزق عطا فرمائے گا جہاں سے اسے گمان بھی نہ ہو گا ۔  (  [5])

سوال      سَیِّدُ الْاِسْتِغْفَار کیا ہے اور اس کی کیا فضیلت ہے ؟

جواب     حضرت شدّاد بن اوس رَضِیَ اللہُ تَعَالٰی عَنْہ سے روایت ہے ، رسولُ اللّٰہ صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمنے ارشاد فرمایا :  سب سے اعلیٰ استغفار یہ ہے کہ تم کہو : ’’اَللّٰہُمَّ اَنْتَ رَبِّیْ ، لَا اِلٰـہَ اِلاَّ اَنْتَ ، خَلَقْتَنِیْ وَاَنَا عَبْدُکَ ، وَاَنَا عَلٰی عَہْدِکَ وَوَعْدِکَ مَا اسْتَطَعْتُ ، اَعُوْذُ بِکَ مِنْ شَرِّ مَا صَنَعْتُ ، اَبُوْ ءُ لَکَ بِنِعْمَتِکَ عَلَیَّ وَ اَبُوْ ءُ بِذَنْبِی فَاغْفِرْلِی فَاِنَّہٗ لَا یَغْفِرُ الذُّنُوْبَ اِلاَّ اَنْتَ ۔ “ارشاد فرمایا کہ جو سچے دل سے دن میں یہ کہہ لے پھر اسی دن شام سے پہلے مرجائے تو وہ جنتی ہوگا اور جوسچے دل سے رات میں یہ کہہ لے پھر صبح سے پہلے فوت ہوجائے تو وہ جنتی ہوگا ۔  (  [6])

غیبت

سوال      کسی کو غیبت سے روکنے کے کچھ فضائل بیان کیجئے ؟

جواب     دو فرامین مصطفے ٰصَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم :  (  1) جس کے سامنے اس کے مسلمان بھائی کی غیبت کی جائے اور وہ اس کی مدد پر قادِر ہو اور مدد کرے ، اللہ تعالیٰ دنیا اور آخِرت میں اس کی مدد فرمائے گا اور اگر باوُجُودِ قدرت اس کی مدد نہیں کی تو اللہ تعالیٰ دنیا اورآخِرت میں اس کی پکڑفرمائے گا ۔  (  [7])  (  2) جو شخص اپنے بھائی کی عدم موجودگی میں اس کا گوشت کھانے  (  غیبت کرنے ) سے روکے تواللہ عَزَّ  وَجَلَّ پر حق ہے کہ اُسے جہنم سے آزاد کر دے ۔  (  [8])

سوال      کسی کی غیبت سننا کیسا ہے ؟

جواب     حضورسرورِ کونین ، شہنشاہِ دارَین صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم نے گانا گانے اور گانا سننے سے ، غیبت کرنے اور غیبت سننے سے اور چغلی کرنے اور چغلی سننے سے منع فرمایا ۔  (  [9]) حضرتِ علامہ عبد الرَّء ُوْف مُناوِی عَلَیْہِ رَحْمَۃُ اللہِ الْوَ الِی فرماتے ہیں  :  غیبت سننے والا بھی غیبت کرنے والوں میں سے ایک ہوتا ہے ۔  (  [10])

سوال      غیبت سے توبہ کا طریقہ بیان کیجئے ؟

 



[1]     تفسیر صراط الجنان ، پ۱۱ ، ھود ، تحت الآیۃ : ۳ ، ۴ /  ۳۹۳ ۔

[2]     مرآۃ المناجیح ، ۳ / ۳۶۳ ۔

[3]     مسند امام احمد ، مسند ابی سعید الخدری ، ۴ /  ۵۹ ، حدیث : ۱۱۲۴۴ ۔

[4]      مدارک ، پ۱۹ ، الشعراء ، تحت الآیة : ۸۲ ، ص۸۲۳ ، حدیقة ندیة ، الباب الثانی     الخ ، الفصل الاول      الخ ، ۱ /  ۲۸۸ ۔

[5]     ابن ماجہ ، کتاب الادب ، باب الاستغفار ، ۴ /  ۲۵۷ ، حدیث : ۳۸۱۹ ۔

[6]     بخاری ، کتاب الدعوات ، باب افضل الاستغفار ، ۴ /  ۱۸۹ ، حدیث : ۶۳۰۶ ۔