Book Name:Dilchasp Malomaat Sawalan Jawaaban Part 02

جواب     پہلی رکعت میں سورۃُ النّاس عَمَداً  (  جان بوجھ کر) نہیں پڑھنی چاہئے تاکہ تکرار کی ضرورت نہ پڑ جائے اگر سَہْواً  (  بھول کر) یاعمداًپڑھ چکا تواب دوسری رکعت میں وہی سورت یعنی سورۃُ النّاس دوبارہ پڑھے کیونکہ ترتیب بدل کر پڑھنا تکرار سے بھی سخت ہے بخلاف ختمِ قرآن کی صورت کے کہ اس میں پہلی رکعت میں سورۃُ النّاس تک پڑھنا اور دوسری رکعت میں الٓمّٓ تا مُفْلِحُوْن پڑھنا جائز  اور درست ہے ۔  (  [1])

سوال      اگر کسی شخص نے رکوع کرنے سے پہلے سجدہ کرلیا تو کیا حکم ہے ؟

جواب     قیام ، رُکوع ، سجود اور قعدۂ اَخِیرہ میں ترتیب فرض ہے ، اگر رُکوع سے پہلے سجدہ کر لیا پھر رکوع کیا تو وہ سجدہ جاتا رہا ، اگر رکوع کے بعد دوبارہ  سجدہ کرے گا تو نماز ہو جائے گی ورنہ نہیں ۔  (  [2])

سوال      کارپیٹ پر سجدہ کرتے وقت کس چیز کی احتیاط ضروری ہے نیز کیا اسپرنگ والے گدّے پر سجدہ کیا جاسکتا ہے ؟

جواب     کارپیٹ پر سجدہ کرتے وقت اس بات کا خاص خیال رکھنا ہے کہ پیشانی اچھی طرح جم جائے ورنہ نماز نہ ہوگی اور ناک کی ہڈی نہ دبی تو نماز مکروہِ تَحریمی وَاجِبُ الْاِعَادَہ ہوگی ۔  اسپرنگ والے گدّے پر پیشانی خوب نہیں جمتی لہٰذا  (  اس پر سجدہ کرنے سے ) نماز نہ ہوگی ۔  (  [3])

سوال      کس صورت میں چوتھی رکعت کا سجدہ کرتے ہی فرض باطل ہوجاتے ہیں؟

جواب     مغرب کی نماز میں تیسری رکعت پر نہ بیٹھا اور چوتھی کا سجدہ کرلیاتو فرض باطل ہوجائیں گے  ۔  (  [4])

سوال      سجدے کی جگہ قدموں والی جگہ سے اونچی ہو توکیا سجدہ ہوجائے گا؟

جواب     ایسی جگہ سجدہ کیا جو قدم کی بہ نسبت بارہ اُنگل سے زیادہ اونچی ہے تو سجدہ نہیں ہوگا اور بارہ انگل سے کم یا صرف بارہ انگل اونچی ہے تو ہوجائے گا ۔  (  [5])

واجباتِ نماز اور سجدۂ سہو

سوال      وہ کون سی صورت ہے کہ سَہْو ہونے کے باوجود سجدۂ سَہْو نہ کرنا اَولیٰ ہے ؟

جواب     اس صورت میں جبکہ جمعہ وعیدین میں حاضِرِین کثیر ہوں اور فتنہ کا خوف ہوتو سجدۂ سَہْو نہ کرنا اولیٰ ہے  ۔  (  [6])

سوال      کس صورت میں امام کے سجدۂ سَہْو کے لیے سلام پھیرنے پرمقتدی نے سلام پھیردیا تو اس کی نماز ٹوٹ جائے گی ؟

جواب     مَسْبُوق یعنی وہ شخص جو پہلی رکعت کے بعد جماعت میں شامل ہوا جب تک اپنی رکعتیں مکمل نہ کرلے سلام نہیں پھیرسکتا لہٰذا اگر امام نے سجدۂ سَہْو سے پہلے یا بعد سلام پھیرا اور مَسْبُوق نے بھی قصداً سلام پھیرا تو اس کی نماز ٹوٹ جائے  گی ہاں اگر بھول کر پھیرا تو نہیں ٹوٹے گی ۔  (  [7])

سوال     مَسْبُوق نے بھول کر امام کے ساتھ سلام پھیرا تو اس پر سجدۂ سَہْو ہے یا نہیں؟

جواب     اگر مَسْبُوق نے (  بھول کر) امام کے ساتھ مَعاً بلا وقفہ سلام پھیرا تو اس پر سجدۂ سَہْو نہیں اور اگر سلام امام کے کچھ بھی بعد پھیرا تو کھڑا ہو جائے اپنی نماز پوری کرکے سجدۂ سَہْو کرے ۔  (  [8])

سوال      فاتحہ کے بعد سورت پڑھنا بھول گیا اور رُکوع یا سجدے میں یاد آیا  تو کیا کرے ؟

جواب     جو سورت ملانا بھول گیا اگر اسے رُکوع میں یاد آیا تو فوراً کھڑے ہوکر سورت پڑھے پھر رُکوع دوبارہ کرے پھر نمازتمام کرکے سجدۂ سَہْو کرے اور اگر رُکوع  كے بعد سجدہ میں یاد آیا تو صرف اَخِیر میں سجدۂ سَہْو کرلے نماز ہوجائے گی ۔  (  [9])

سوال  امام نے رکوع سے اٹھتے وقت سَمِعَ اللہُ لِمَنْ حَمِدَہ کی جگہ اَللہُاَکْبَر کہا اور سجدۂ سَہْو نہیں کیاتو نماز ہوگئی یا نہیں؟

جواب     نماز ہوگئی اور سجدۂ سَہْو کی اصلاً حاجت نہیں ۔  (  [10])

سوال      اگر کسی نے قیام کی حالت میں تشہدپڑھا یا قعدۂ اُولیٰ میں ایک سے زیادہ مرتبہ تشہد پڑھا تو کیا حکم ہے ؟

جواب   پہلی دو رکعتوں کے قیام میں اَلْحَمْد کے بعد تشہد پڑھا (  تو) سجدۂ سہو واجب ہے اور اَلْحَمْد سے پہلے پڑھا تو نہیں ۔ پچھلی (  یعنی آخری) رکعتوں کے قیام میں تشہد پڑھا تو سجدہ واجب نہ



[1]     فتاوی رضویہ ، ۶ /  ۲۶۶ ۔

[2]     درمختار مع ردالمحتار ، کتاب الصلاة ، باب صفة الصلاة ، ۲ /  ۱۷۲ ۔

[3]     نماز کے احکام ، ص۲۱۴ ۔

[4]     غنیۃ المتملی ، فرائض الصلاة ، السادس القعدة الاخیرة ، ص۲۹۰ ۔

[5]     درمختار مع ردالمحتار ، کتاب الصلاة ، باب صفة الصلاة ، ۲ /  ۲۵۷ ۔

[6]     درمختار مع ردالمحتار ، کتاب الصلاة ، باب سجود السھو ، ۲ /  ۶۷۵ ۔

[7]     ردالمحتار ، کتاب الصلاة ، باب سجود السھو ، ۲ /  ۶۵۹ ۔

[8]     ردالمحتار ، کتاب الصلاة ، باب سجود السھو ، ۲ /  ۶۵۹ ۔

[9]     فتاوی رضویہ ، ۸ /  ۱۹۶ ۔

[10]     فتاوی رضویہ ، ۸ /  ۲۱۶ ۔



Total Pages: 122

Go To