Book Name:Dilchasp Malomaat Sawalan Jawaaban Part 02

جواب     قیامت کے دن سخت گرمی کے عالَم میں شدید پیاس کے وقتحضور رَحْمَۃٌ لِّلْعَالَمِیْن ، خَاتَمُ النَّبِیِّیْنصَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّم) ربِّ قہار عَزَّ  وَجَلَّ کی بارگاہ میں ہمارے لئے سر سجدہ میں رکھیں گے اور امت کی بخشش کی درخواست کریں گے ۔  کہیں امتیوں کے نیکیوں کے پلڑے بھاری کریں گے ، کہیں پُلِ صراط سے سلامتی سے گزاریں گے ، کہیں حوضِ کوثر سے سیراب کریں گے ، کبھی جہنم میں گرے ہوئے امتیوں کو نکال رہے ہوں گے ، کسی کے درجات بلند فرما رہے ہوں گے ، خود روئیں گے ہمیں ہنسائیں گے ، خود غمگین ہوں گے ہمیں خوشیاں عطا فرمائیں گے ، اپنے نورانی آنسوؤں سے امت کے گناہ دھوئیں گے ۔  (  [1])

اِیمان وکُفر

سوال      انسان پر سب   سے اوّلین واہم ترین فرض کیا ہے ؟

جواب     سب سے اولین فرض یہ ہے کہ انسان بنیادی عقائد کا علم حاصل کرے ، جس سے آدمی صحیح العقیدہ سُنّی بنتا ہے اور جن کے اِنکار و مخالَفَت سے کافِر یاگمراہ ہوجاتا ہے ۔  (  [2])

سوال      احادیثِ کریمہ میں ایمان وکفر کوجانچنے کا کیامعیار بیان کیا گیا ہے ؟

جواب     حضورتاجدارِختمِ نبوت صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمنے ارشادفرمایا :  لَا یُؤْمِنُ أَحَدُکُمْ حَتّٰی أَکُوْنَ أَحَبَّ اِلَیْہِ مِنْ وَّالِدِہٖ وَوَلَدِہٖ وَالنَّاسِ أَجْمَعِیْنَترجمہ :   تم میں سے کوئی بھی اس وقت تک مؤمن نہیں ہوسکتا جب تک میں اس کے نزدیک اس کے والدین ، اولاد اور تمام لوگوں سے زیادہ محبوب نہ ہو جاؤں ۔  (  [3]) اور دلائل الخیرات شریف کی روایت ہے :  لوگوں  کے ایمان وکفر میں مقام ومرتبہ کی پہچان کا معیار یہ ہے کہ جس قدر وہ مجھے محبوب جانیں  گے ایمان کے نزدیک ہوں  گے اور جس قدر مجھ سے بغض رکھیں  گے ایمان سے دُور اور کفر کے نزدیک ہوں  گے ۔  خبردار !  اس کاایمان نہیں  جسے اللہ عَزَّوَجَلَّ کے محبوب سے پیار نہیں ۔  (  [4])

سوال      کونسا شخص ایمان کی حَلَاوَت کو پاسکتا ہے ؟

جواب     حضورِ اَقدس صَلَّی اللہُ تَعَالٰی عَلَیْہِ وَاٰلِہٖ وَسَلَّمنے ارشاد فرمایا : جس شخص میں تین باتیں ہوں گی وہ ایمان کی حَلَاوَت پا لے گا :   (  1) تمام مخلوقات سے بڑھ کر اللہ تعالیٰ اور اس کے رسول سے محبت کرتا ہو ۔    (  2) اللہ تعالیٰ ہی کے لئے کسی سے محبت کرے ۔   (  3) کفر کی طرف لوٹنے کو ایسابرا جانے جیسے آگ میں ڈالے جانے کو برا جانتا ہے ۔  (  [5])

سوال      وہ کونسا شخص ہے جس کے نزع کے وقت سلبِ ایمان کا خطرہ ہے ؟

جواب     ولیٔ   کامل ، مُجدِّدِ اَعظم ، اعلیٰ حضرت امام احمد رضا خان عَلَیْہِ رَحْمَۃُ الرَّحْمٰن نے فرمایا :  علمائے کرام فرماتے ہیں جس کو سلبِ ایمان کا خوف نہ ہو مرتے وقت اُس کا ایمان سلب ہو جانے کا اندیشہ ہے  ۔  (  [6])

سوال      ایمان کی حفاظت کے کچھ اَوْرَاد بتائیے ؟

جواب       ملفوظاتِ اعلیٰ حضرت ص311 پر ہے اکتا لیس بارصبح کو  یَاحَیُّ یَا قَیُّوْمُ لَا اِلٰہَ اِلَّا اَنْتَاول وآخر درود شریف نیز سوتے وقت اپنے سب اَوْرَاد کے بعد سورۂ کافرون روزانہ پڑھ لیا کیجئے ، اس کے بعد کلام وغیرہ نہ کیجئے ہاں اگرضرورت ہوتو کلام کرنے کے بعد پھر سورۂ کافرون تلاوت کرلیں کہ خاتمہ اسی پر ہو ، اِنْ شَآءَ اللہُ تَعَالٰی خاتمہ ایمان پر ہوگااور تین بار صبح اورتین بارشام اِس دعا کا و ِرْد رکھیں :  اَللّٰھُمْ اِنَّا نَعُوْذُبِکَ مِنْ اَنْ نُشْرِکَ بِکَ شَیْأً نَعْلَمُہٗ وَنَسْتَغْفِرُکَ لِمَا لَا نَعْلَمُ ۔  (  [7])

سوال      قرآنِ پاک میں  سب جانوروں میں بدتر کن لوگوں کو قرار دیا گیا ہے ؟

جواب     کافروں کو ،  چنانچہ ارشادِ باری تعالیٰ ہے : )اِنَّ شَرَّ الدَّوَآبِّ عِنْدَ اللّٰهِ الَّذِیْنَ كَفَرُوْا فَهُمْ لَا یُؤْمِنُوْنَۖۚ(۵۵)(  (  پ۱۰ ، الانفال :  ۵۵) ترجَمۂ کنز الایمان :  بیشک سب جانوروں میں بدتر الله کے نزدیک وہ ہیں جنہوں نے کفر کیا اور ایمان نہیں لاتے ۔

سوال      ایمان اور نیک اعمال پر ثابِت قَدَمی میں رکاوٹ بننے والی چند چیزیں بیان کیجئے ؟

جواب      (  1) علمِ دِین سے بہرہ ور نہ ہونا ۔   (  2) مسجد میں حاضر ہونے سے کترانا ۔   (  3) زبان کی حفاظت نہ کرنا ۔   (  4) کفر اور گناہوں کے ذریعے اپنی جانوں پر ظلم کرنا ۔   (  5) کافروں بدمذہبوں اور فاسق و فاجر لوگوں کی صحبت اختیار کرنا ۔   (  6) نفسانی خواہشات کی لذت حاصل کرنے کی حرص ہونا ۔   (  7) مصائب وآلام اور آزمائشوں پر صبر نہ کرنا ۔   (  8) اللہ  تعالیٰ کی رحمت سے مایوس ہونا ۔   (  9) لمبی اُمیدیں رکھنا اور  (  10) دنیا میں رغبت رکھنا وغیرہ ۔  (  [8])

سوال      وہ کون سے گناہ ہیں جن کی بخشش نہیں ؟

 



[1]     تفسیر صراط الجنان ، پ۴ ، اٰل عمران ، تحت الآیۃ : ۱۶۴ ، ۲ /  ۸۷ ۔

[2]      ماخوذاز فتاویٰ رضویہ ، ۲۳ /  ۶۲۳ ۔

[3]      بخاری ، کتاب الایمان ، باب حب الرسول من الایمان ، ۱ / ۱۷ ، حدیث : ۱۵ ۔

[4]      دلائل الخیرات مع شرحہ مطالع المسرات ، فصل فی فضل الصلا ةعلی النبی ، ص۷۵ ۔

[5]     مسلم ، کتاب الایمان ، باب بیان خصال من اتصف... الخ ، ص۴۷ ، حدیث : ۱۶۵ ۔

[6]     ملفوظات اعلیٰ حضرت ، ص۴۹۵ ۔

[7]     مسند امام احمد ، مسند الکوفیین ، ۷ /  ۱۴۶ ، حدیث : ۱۹۶۲۵ ، ملفوظات اعلیٰ حضرت ، ص۳۱۱ ۔

[8]     تفسیر صراط الجنان ، پ۱۲ ، ہود ، تحت الآیۃ : ۱۱۲ ، ۴ / ۵۰۶ ۔



Total Pages: 122

Go To