We have moved all non-book items like Speeches, Madani Pearls, Pamphlets, Catalogs etc. in "Pamphlet Library"

Book Name:Yateem kisay kehtay hain?

وہ ادا کیا جائے ،پھر اگر اس نے کوئی جائز وصیت کی ہے تو اس کے مال کے تیسرے حصّے سے اس کی وصیت کو پورا کیا جائے ،پھر اس کے بعد جو مال بچ جائے اس میں سے شوہر کو حصَّہ ملنے کی دو صورتیں ہیں اگر زوجہ کا بیٹا بیٹی یا پوتا پوتی میں سے کوئی  نہ ہوتو اس صورت میں شوہر کو کل مال کا آدھا ملے گا اور اگر زوجہ  کا بیٹا بیٹی یا پوتا پوتی میں سے کوئی  ہوتو اس صورت میں شوہر کوکُل مال کا چوتھائی حصّہ ملے گا چنانچہ پارہ 4سورۃُ النسآء کی آیت نمبر 12میں خدائے رحمٰن عَزَّوَجَلَّ  کا فرمانِ عالیشان ہے :

وَلَکُمْ نِصْفُ مَا تَرَکَ اَزْوَاجُکُمْ اِنۡ لَّمْ یَکُنۡ لَّہُنَّ وَلَدٌ ۚ فَاِنۡ کَانَ لَہُنَّ وَلَدٌ فَلَکُمُ الرُّبُعُ مِمَّا تَرَکْنَ مِنۡۢ بَعْدِ وَصِیَّۃٍ یُّوۡصِیۡنَ بِہَاۤ اَوْدَیۡنٍ ؕ

ترجمۂ کنزالایمان:اور تمہاری بیبیاں جو چھوڑ جائیں اس میں سے تمہیں آدھا ہے اگر ان کی اولاد نہ ہو پھر اگر ان کی اولاد ہو تو اُن کے ترکہ میں سے تمہیں چوتھائی ہے جو وصیت وہ کر گئیں اور دَین نکال کر۔

کیا کبوتر سیِّد ہوتے ہیں ؟

سُوال:عوام میں یہ مشہور ہے کہ کبوتر سَیِّد ہیں یہ کہاں تک دُرُست ہے؟

جواب:عوام میں یہ غَلَط  مشہور ہے کوئی بھی  جانور سیِّدنہیں ہوتا۔اَلبتہ حرم شریف کے کبوتر ان کبوتروں کی نسل میں سے ہیں جنہوں نے غارِ ثور کے دروازے پر


 

 



Total Pages: 28

Go To